عظیم ثقافتی ورثے کے تحفظ اور بحالی کے لئے اقدامات، ہیرٹیج ایڈوائزری کمیٹی تشکیل دیدی گئی

بدھ ستمبر 23:10

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 11 ستمبر2019ء) پاکستان میں موجود عظیم ثقافتی ورثے کے تحفظ اور بحالی کے لئے اقدامات کئے جارہے ہیں اور اس سلسلہ میں ہیرٹیج ایڈوائزری کمیٹی تشکیل دی جاچکی ہے۔ ذرائع کے مطابق وزیراعظم کی ہدایات کی روشنی میں پاکستان کے عظیم تاریخی و ثقافتی ورثے کی حفاظت وبحالی کے لئے کام کیا جا رہا ہے، اس سلسلہ میں قومی تاریخ و ادبی ورثہ ڈویژن یونیسکو کے ساتھ مل کر کام کر رہا ہے تاہم اس ضمن میں صوبائی اور ضلعی سطح پر بھی کمیٹیاں تشکیل دی جارہی ہیں، جن میں رضاکاروں کو بھی شامل کیا گیا ہے۔

ابتدائی طور پر ان تاریخی مقامات کی نشاندہی کی جارہی ہے اور اس کے بعد ان کی حالت کا جائزہ لے کر فوری اقدامات کئے جائیں گے۔ ایک اندازے کے مطابق پاکستان میں 10 ہزار سے زائد تاریخی مقامات موجود ہیں، جن میں سے کچھ کو ورلڈ ہیرٹیج سائیٹس کی حیثیت دی جاچکی ہیں لیکن بہت سے ایسے مقامات ہیں جن کی طرف گزشتہ حکومتوں نے توجہ نہیں دی اور ان کو حالات کے رحم وکرم پر چھوڑ دیا گیا لیکن موجودہ حکومت نے اس سلسلہ میں فوری اقدامات کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور متعلقہ محکموں سے کہا ہے کہ وہ اس ضمن میں کئے جانے والے اقدامات کی تفصیلات بتائیں۔

(جاری ہے)

پاکستان میں ماضی کی کئی تہذیبوں کے آثار موجود ہیں اور یہاں کئی ایسے مقامات اور ایسی عمارتیں بھی موجود ہیں جن کا تعلق ماضی کی تہذیبوں سے ہے۔ مذہبی اور تاریخی اہمیت کی حامل یہ عمارتیں ہمارا قیمتی اثاثہ ہیں اور ان کی حفاظت و بحالی کے لئے ہر ممکن کوشش کی جارہی ہے۔

متعلقہ عنوان :