ممنوعہ گٹکاکی فروخت پر پان شاپ،کریانہ سٹور،ناقص آئل کے استعمال،حشرات کی بہتات پر 5فوڈ پوائنٹس سیل

متعددفوڈپوائنٹس کو135,000کے جرمانے،وارننگ نوٹسز جاری،مضر صحت اشیاء تلف

بدھ ستمبر 23:21

راولپنڈی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 11 ستمبر2019ء) ڈائریکٹر جنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی کیپٹن (ر) محمد عثمان کی ہدایت پرفوڈسیفٹی ٹیموں نے راولپنڈی اور گردونواح میں کارروائیاں کرتے ہوئے ممنوعہ ا شیاء کی فروخت،غیرمعیاری اجزاء کے استعمال اور صفائی کے ناقص انتظامات پر07 فوڈ پوائنٹس کو سر بمہر کیا۔ متعدد فوڈ پوائنٹس کو سابقہ ہدایات پر عمل نہ کر نے اور حفظان صحت کے اصو لوں کی خلاف ورزیوں پر135,000کے جرمانے عائدکرتے ہوئے مضر صحت اشیاء تلف کر دیں۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب فوڈ اتھارٹی راولپنڈی کی فوڈ سیفٹی ٹیموں نے ممنوعہ گٹکا، زائد المیعاد اشیاء کی فروخت،غیر معیاری سٹوریج،صفائی کے ناقص انتظامات پرچاچو پان شاپ جبکہ اٹک میں رشید کریانہ سٹور کو سیل کر دیا۔

(جاری ہے)

اسی طرح سابقہ ہدایات پر عمل نہ کرنے،ناقص آئل کے استعمال،حشرات کی بہتات پر دین ہوٹل ،صمد فوڈز،شانگلہ بریڈ اینڈ ریفریشمنٹ،کوئٹہ زلمی ریسٹورنٹ اور سپر پرائم فوڈز اینڈ ریسٹورنٹ کو سر بمہر کیا گیا۔

علاوہ ازیں راولپنڈی میںچیکنگ کرتے ہوئے مختلف فوڈ پوائنٹس کو غیر معیاری خوراک کی فراہمی، ملازمین کے میڈیکلزکی عدم دستیابی اورصفائی کے ناقص انتظامات پر 125,000کے جرمانے عائد کیے ۔جہلم اور اسکے گردونواح میں پنجاب فوڈ اتھارٹی قوانین کی خلاف ورزیوں پر10,000 کے جرمانے عائد کیے گئے۔ڈویژن بھرمیں کارر وائیوں کے دوران بھاری مقدار میںناقص آئل ،زائد المیعاد اشیاء اور مضر صحت خوراک تلف کی گئی۔ فوڈ سیفٹی ٹیموں نے چیکنگ کے دوران درجنوں فوڈ پوائنٹس کو حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزیوں پرحتمی نوٹسز بھی جاری کیے۔