پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں تیزی ، مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت میں 71ارب38کروڑ35 لاکھ روپے بڑھ گئے

پیر ستمبر 19:48

پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں تیزی ، مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت میں ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 16 ستمبر2019ء) پاکستان اسٹاک ایکسچینج میںکاروباری ہفتے کے پہلے روز پیر کو زبردست تیزی کا رجحان دیکھنے میں آیا جس کے نتیجے میں کے ایس ای100انڈیکس447.24پوائنٹس کے اضافے سی31928.55پوائنٹس کی سطح پرپہنچ گیا جب کہ 53.33فیصد حصص کی قیمتوں میںاضافہ ریکارڈکیا گیا جس سے مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت میں 71ارب38کروڑ35 لاکھ روپے بڑھ گئے اور کاروباری حجم بھی گزشتہ ٹریڈنگ سیشن کی نسبت 1.4فیصدزائد رہا۔

گزشتہ روز سرمایہ کاروں کی جانب سے منافع بخش کمپنیوں کے شیئرز کی خریداری میں دلچسپی بڑھنے کے باعث کاروبار کا آغاز مثبت زون میں ہوا جس کے باعث کے ایس ای100انڈیکس 31950پوائنٹس کی بلند سطح پر پہنچ گیا تاہم بعد ازاں منافع حصول کی عرض سے شیئرز فروخت کے باعث 31ہزر کی نفسیاتی حد عبور نہ ہوسکی لیکن تیزی کے اثرات غالب رہے اورمارکیٹ کے اختتام پرکے ایس ای100انڈیکس447.24پوائنٹس کے اضافے سی31928.55پوائنٹس پر بندہوا۔

(جاری ہے)

اسی طرح کے ایس ای30انڈیکس232پوائنٹس کے اضافے سے 15066.29پوائنٹس،کے ایم آئی30انڈیکس 1003.23پوائنٹس اضافے سی50720پوائنٹس جبکہ کے ایس ای آل شیئر انڈیکس 296.15پوائنٹس کے اضافے سے 23334.15پوائنٹس پربندہوا ۔ گزشتہ روزمجموعی طورپر345کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا،جن میں سی184کمپنیوں کے حصص کے بھاؤمیں اضافہ144کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں کمی جبکہ17کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں استحکام رہا۔

سرمایہ کاری مالیت میں71ارب38کروڑ35 لاکھ روپے کا اضافہ ہوا جس کے نتیجے میں سرمایہ کاری کی مجموعی مالیت بڑھ کر63کھرب 86ارب86کروڑ70لاکھ روپے ہوگئی گزشتہ روزمجموعی طور پر10کروڑ46لاکھ5ہزارشیئرزکاکاروبارہواجوجمعہ کی نسبت 15لاکھ12ہزارشیئرززائدہیں۔قیمتوں کے اتارچڑھاؤ کے حساب سی نیسلے پاکستان کے حصص سرفہرست رہے جس کے حصص کی قیمت 140روپے اضافے سی5890روپے اورکولگیٹ پامولو کے حصص کی قیمت 39.27روپے اضافے سی2134روپے پر بند ہوئی۔

نمایاں کمی رفحان میظ کے حصص میں ریکارڈکی گئی جس کے حصص کی قیمت289روپے کمی سی5711ہزارروپے اورمری بریوری کے حصص کی قیمت 27.85روپے کمی سی712روپے ہوگئی۔نمایاں کاروباری سرگرمیوں کے لحاظ ے ڈی جی خان سیمنٹ،آئل اینڈ گیس ڈیولپمنٹ،ہیسکول پٹرول ، یونٹی فوڈز،کے الیکٹرک،پاک الیکٹران ،میپل لیف، ورلڈ کال ٹیلی کام،،لوٹی کیمکل اور امریلی اسٹیلز کے حصص سرفہرست رہے ۔