صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی سے اقوام متحدہ کے پاپولیشن فنڈکی کنٹری ڈائریکٹر لینا محمود موسیٰ کی ملاقات

حکومت آبادی کے پھیلائو کی روک تھام کیلئے پر عزم ہے، اس امرکیلئے معاشرے کے تمام طبقوں کو فعال کیا جارہا ہے، صدر مملکت

بدھ ستمبر 15:35

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 18 ستمبر2019ء) صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی سے اقوام متحدہ کے پاپولیشن فنڈ (یو این ایف پی ای) کی کنٹری ڈائریکٹر لینا محمود موسیٰ نے بدھ کو یہاں ایوان صدر میں ملاقات کی ۔اس موقع پر صدر مملکت نے کہا کہ کوئی بھی ملک وسائل کے مقابلے میں زیادہ بڑھتی ہوئی آبادی کی وجہ سے ترقی نہیں کرسکتا ۔حکومت آبادی کے پھیلائو کی روک تھام کیلئے پر عزم ہے اس امر کیلئے معاشرے کے تمام طبقوں کو فعال کیا جارہا ہے۔

صدر مملکت نے کہا کہ انہوں نے اسلامی نظریاتی کونسل کو یہ ہدایت کی ہے کہ وہ خواتین کے ورثہ خوارک کی کمی اور آبادی میں اضافے جیسے سماجی مسائل سے عوام کو آگاہ کرنے کیلئے اپنے پلیٹ فارم کو بروئے کار لائیں ۔انہوں نے کہا کہ حمل کے دوران مناسب وقفہ نہ ہونے کی وجہ سے خوراک کی کمی جیسے مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے، موجودہ حکومت ایسی ہنر مند خواتین جو بچوں کی نگہداشت کی وجہ سے گھروں سے نہیں نکل سکتیں ان خواتین کو ان کی دہلیز پر ملازمتوں کے مواقعے فراہم کرنے کیلئے خصوصی توجہ مرکوز کئے ہوئے ہے۔

(جاری ہے)

پاکستان اور یو این ایف پی اے کی جانب سے 8 ویں کنٹری پروگرام پر کامیابی سے عملدرآمد پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے انہوں نے امید ظاہر کی کہ حالیہ کنٹری پروگرام 2018 تا 2022 بہتر خاندانی منصوبہ بندی خواتین کوبا اختیار بنانے ،بہتر صحت کی سہولیات اور نوجوانوں کو سرمایہ کاری کے بہتر مواقعے فراہم کرے گا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان یو این ایف پی اے کے ساتھ قریبی تعلق کا حامل ہے اور اس کی پہلی خاتون سربراہ ڈاکٹر نفیس صادق کا تعلق پاکستان سے تھا ۔

انہوں نے حالیہ مردم شماری میں یو این ایف پی اے کے تعاون اور تکنیکی معاونت کو سراہا ۔لینا محمود موسیٰ نے مسائل پر صدر مملکت کے گہرے علم کو سراہتے ہوئے کہا کہ انہیں صدر مملکت کے تذویراتی ویژن سے بھر پور فائدہ ہوگا ۔انہوں نے صدر مملکت سے اتفاق کیا کہ بڑھتی ہوئی آبادی کی روک تھام کیلئے مقامی اقتدار اور روایات پر بھر پور نظر رکھی جائے اس کے علاوہ مطلوبہ نتائج حاصل نہیں ہوسکتے۔صدر مملکت نے یو این ایف پی اے کی انڈر سیکرٹری جرنل ڈاکٹر نتالیہ کینم کی جانب سے نیروبی سربراہ اجلاس میں دعوت پر ان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے ان کامیابی کیلئے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔