لاہور ہائیکورٹ نے ویڈیو سکینڈل میں ملوث جج ارشد ملک کی پرفارما پروموشن کیلئے دائر درخواست بحال کر دی

جمعہ ستمبر 18:36

لاہور ہائیکورٹ نے ویڈیو سکینڈل میں ملوث جج ارشد ملک کی پرفارما پروموشن ..
لاہور۔20 ستمبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 20 ستمبر2019ء) لاہور ہائیکورٹ کے فل بینچ نے ویڈیو سکینڈل میں ملوث جج ارشد ملک کی پرفارما پروموشن کے لیئے دائر درخواست جج ارشد ملک کی عدم پیروی کی بنیاد پر خارج درخواست بحال کر دی۔جسٹس شمس محمود مرزا، جسٹس فیصل زمان خان اور جسٹس ساجد محمود سیٹھی پر مشتمل فل بنچ نے ارشد ملک کی پرفارما پروموشن کی درخواست پر سماعت کی۔

درخواستگزار جج ارشد ملک کی طرف سے حافظ طارق نسیم ایڈووکیٹ پیش ہوئے ۔

(جاری ہے)

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ سینر ترین سیشن جج ہوں، ساتھی ججز کو 2009 میں سیشن جج کے عہدوں پر ترقی دیدی گئی تھی، جبکہ مجھے 2013ء میں ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کے عہدے پر ترقی دی گئی، درخواست گزار ارشد ملک نے عدالت سے استدعا کی کہ بیج میٹ ججوں کیساتھ 2009ء سے پرفارما پروموشن دی جائے۔عدالت نے ابتدائی سماعت پر رجسٹرار ہائی کورٹ کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا تھا۔ فل بنچ نے گزشتہ جمعہ کو درخواستگزار کے وکیل کے پیش نہ ہونے پر درخواست عدم پیروی مسترد کر دی تھی۔