دو خواتین نے ایک کلو سونے کے کیپسول نگل لیے

پولیس نے گرفتار کیا مگر جرائم پیشہ عناصر چھڑا کر لے گئے اور سونا نکال لیا

Sajjad Qadir سجاد قادر جمعہ نومبر 06:49

دو خواتین نے ایک کلو سونے کے کیپسول نگل لیے
نیٹ نیوز ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 نومبر2019ء)   کتنا حیرت انگیز ہوتا ہے جب کوئی حقیقی واقعہ دیکھ یا سن کر فلمی سین کا گمان ذہن میں آتاہے۔شاذ و نادر ایسے واقعے معاشرے میں پیش آ جاتے ہیں جن کے دیکھنے سے لگتا ہے کہ یہ کسی فلم کامنظر ہے مگر انڈیا میں حقیقی مناظر کو ہی فلم کا مناظر کر کے شوٹ کیا جاتا ہے کیونکہ وہاں کچھ بھی ممکن ہوسکتا ہے۔

گزشتہ روز بھی انڈیامیں ایک ایساواقعہ پیش آیا ہے کہ جسے دیکھ کر فلم کا گماں ہوتا ہے مگر وہ حقیقت ہے۔واقعہ کچھ اس طرح ہے کہ ایک کلو سے زائد وزن کے سونے کے کیپسول نگلنے والی 2 خواتین کی گرفتاری کے بعد مبینہ طور پر انہیں جرائم پیشہ افراد اغوا کرکے لے گئے اور ان کے پیٹ سے سونا نکال لیا۔فلمی مناظر جیسا یہ واقعہ گزشتہ روز تامل ناڈو کے دارالحکومت چنئی میں پیش آیا، جہاں جرائم پیشہ افراد دونوں خواتین کو کسٹم حکام کی تحویل سے اغوا کرکے فرار ہوگئے۔

(جاری ہے)

مبینہ طور پر غنڈوں کی جانب سے کسٹم حکام کی تحویل سے اغوا کی گئیں خواتین کو کچھ دیر قبل ہی ایئرپورٹ پر حد سے زیادہ پھولے ہوئے پیٹ کی شک کی بنیاد پر گرفتار کیا گیا، جنہوں نے بعد ازاں اعتراف کیا تھا کہ انہوں نے سونے کے کیپسول نگل رکھے ہیں۔ٹائمز آف انڈیا نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ تیرسا اور فاطمہ نامی دونوں خواتین 6 نومبر کو سری لنکا کے دارالحکومت کولمبو سے چنئی پہنچی تھیں اور دونوں خواتین کے پیٹ حد سے زیادہ پھولے ہوئے تھے۔

رپورٹ کے مطابق ایئرپورٹ پر کسٹم حکام نے خواتین کے ضرورت سے زیادہ پیٹ باہر ہونے کی صورت میں انہیں روکا اور ان کی اسکیننگ کیے جانے کے دوران معلوم ہوا کہ دونوں خواتین کے پیٹ میں اسمگل شدہ سونا ہے۔اسکیننگ کے بعد خواتین نے اعتراف کیا کہ دونوں نے 30 سے زیادہ سونے کے کیپسول نگل رکھے ہیں، جس کے بعد دو کسٹم اہلکار انہیں اپنی ذاتی گاڑی میں نجی ہسپتال منتقل کر رہے تھے کہ جرائم پیشہ افراد نے حملہ کرکے دونوں خواتین کو اغوا کرلیا۔

کسٹم حکام نے خواتین کے اغوا کیے جانے کی رپورٹ پولیس میں درج کروائی اور پولیس نے تفتیش کے بعد دونوں خواتین کو ایک بار پھر گرفتار کرلیا۔دوبارہ گرفتاری کے بعد خواتین نے پولیس کو بتایا کہ وہ کسی بھی جرائم پیشہ گروہ کو نہیں جانتیں اور نہ ہی ان کا تعلق کسی اسمگلر گروپ سے ہے، جس وقت انہیں اغوا کیا گیا، اس وقت ان کی آنکھیں پٹی سے باندھ دی گئی تھیں اور اغوا کاروں نے ان کے پیٹ سے تمام سونا نکال لیا۔بعد ازاں پولیس نے دونوں خواتین کو مزید تفتیش کے لیے کسٹم حکام کے حوالے کردیا۔