بھارت میں شفا کیلئے درخت کی پوجا شروع کردی گئی

جمعہ نومبر 21:56

نئی دہلی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 08 نومبر2019ء) بھارتیوں نے بیماریوں سے بچنے کے لیے درخت کی پوجا شروع کردی ہے۔بھارتی خبر رساں ادارے نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ایک ویڈیو شیئر کی، جس میں واضح طور پر دیکھا جا سکتا ہے کہ ہزاروں کی کی تعداد میں ہندو ایک درخت کی پوجا کر رہے ہیں اور وہاں بھارتی پولیس بھی موجود ہے۔بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی ریاست پنجاب کے ’نیا‘ گاؤں میں ایک افواہ پھیلی ہے کہ وہاں ایک درخت ہے جو لوگوں کو بیمار ی سے نجات دلا کر شِفایاب کر رہا ہے۔

یہ معجزاتی درخت روزانہ 25,000 سے 30,000 افراد کو اپنی جانب راغب کر رہا ہے جبکہ گزشتہ 2 ماہ سے اب تک تقریباً 10 لاکھ افراد اِس درخت کی پوجا کرنے آچکے ہیں۔افواہ پھیلانے والے شخص نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ’وہ ایک دن اپنے گھر جارہا تھا اور اس کا اس درخت کے پاس سے گزر ہوا، یکایک اس نے محسوس کیا کہ درخت اسے اپنی طرف کھینچ رہا ہے اور پھر درخت نے 10 منٹ تک اٴْسے پکڑے رکھا۔

(جاری ہے)

‘اٴْس شخص نے بات جاری رکھتے ہوئے بتایا کہ ’اس درخت نے اٴْس کو چھوڑا تو وہ خود میں کافی تبدیلی محسوس کر رہا تھا۔اٴْس شخص کا کہنا ہے کہ وہ جوڑوں کی تکلیف میں مبتلا تھا لیکن اِس واقعے کے بعد اٴْس کو کبھی جوڑوں کا درد نہیں ہوا، اب وہ شخص ہر بدھ اور اتوار کو درخت کی پوجا کرنے جاتا ہے۔‘جنگل کے عہدیداروں اور پولیس کا کہنا ہے کہ وہ اِ س انتظار میں ہیں لوگوں کی یہاں آمد کب ختم ہوگی، انہیں یہاں کوئی علامت بھی نظر نہیں آرہی۔

مقامی پولیس کا کہنا ہے کہ اِس معجزاتی درخت کی وجہ سے گاؤں کے لوگوں کا کاروبار بھی چل رہا ہے، درخت کی پوجا کے لیے آنے والے افراد ناریل خریدتے ہیں، پانی کی بوتلیں خریدتے ہیں اور ساتھ ہی کٴْچھ نہ کٴْچھ کھانے کے لیے بھی خریدتے ہیں۔بھارتیوں نے’شفا‘کیلئے درخت کی پوجا شروع کردی۔واضح رہے کہ اِس معجزاتی درخت کی پوجا کرنے کے لیے بچے، خواتین، مرد، بوڑھے اور بیمار لوگ بھی بڑی تعداد میں آرہے ہیں، مریضوں کو کٴْرسیوں پر بٹھا کر درخت تک لے جایا جاتا ہے۔