Live Updates

قطرکی ایئرایمبولنس نوازشریف کیلئے تیارکھڑی ہے، شیخ رشید

ایک سال سے کہہ رہا ہوں نوازشریف سے کوئی پیسا نہیں نکلے گا، نوازشریف مریم نواز کی وجہ سے سیاسی بحران کا شکار ہوئے،وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید کی گفتگو

جمعہ نومبر 22:50

قطرکی ایئرایمبولنس نوازشریف کیلئے تیارکھڑی ہے، شیخ رشید
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 08 نومبر2019ء) وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے کہا ہے کہ قطرکی ایئرایمبولنس نوازشریف کیلئے تیارکھڑی ہے، ایک سال سے کہہ رہا ہوں نوازشریف سے کوئی پیسا نہیں نکلے گا، نوازشریف مریم نواز کی وجہ سے سیاسی بحران کا شکار ہوئے۔ انہوں نے آج یہاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اللہ نوازشریف اورآصف زرداری کوصحت دے۔

ملک کا لوٹا ہوا پیسا آصف زرداری کے دوستوں سے نکلے گا۔ ایک سال سے کہہ رہا ہوں نوازشریف سے کوئی پیسا نہیں نکلے گا۔ شیخ رشید نے کہا کہ نوازشریف مریم نواز کی وجہ سے سیاسی بحران کا شکارہوئے۔ نوازشریف کیلئے قطر کی ایئرایمبولنس ان کے لیے تیارکھڑی ہے۔ دوسری جانب مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے کہا کہ ڈیل کی باتیں کرنے والوں کو شرم آنی چاہیے، نواز شریف کی طبیعت بہت زیادہ خراب ہے، جو علاج پاکستان میں میسر تھا وہ فراہم کیا گیا اب ان کا علاج پاکستان میں ممکن نہیں ، پوری دنیا میں جہاں بھی ان کا علاج ممکن ہے انہیں ضرور جانا چاہیے۔

(جاری ہے)

احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پر میڈیا سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سروسز ہسپتال کے میڈیکل بورڈ نے بھی نواز شریف کو باہر جا نے کا مشورہ دیا ہے جبکہ ہمارے میڈیکل بورڈ نے بھی یہ تجویز دی ہے۔،نواز شریف کی صحت پر کوئی سمجھوتہ نہیں کر سکتے اور پوری دنیا میں جہاں بھی ان کا علاج ممکن ہے انہیں علاج کرانا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ میری خواہش ہو گی کہ میں نواز شریف کے ساتھ جائوں لیکن اس وقت میرا پاسپورٹ عدالت کے پاس ہے۔

اگر وہ علاج کے لئے چلے جائیں اور میں نہ جا سکوں تو میرے لئے بڑا مشکل ہوگا۔اس وقت تو نواز شریف کے بیرون ملک علاج کے حوالے سے انتظامات کو چچا شہباز شریف دیکھیں گے۔ مریم نواز نے کہا کہ سیاست پوری زندگی چلتی رہے گی، میں ایک سال پہلے اپنی ماں کو کھو چکی ہوں، والدین دوبارہ نہیں ملتے۔اس وقت میری پوری توجہ اپنے والد کی صحت پر مرکوز ہے ، میڈیکل بورڈ نے کہا ہے کہ نواز شریف کیلئے جو علاج پاکستان میں میسر تھا وہ فراہم کیا گیا اوراب ان کا علاج پاکستان میں ممکن نہیں، نو ازشریف کو سپیشلائزڈ سنٹر میں جانا چاہیے ، وہیں بیماری کی تشخیص ہو سکے گی۔
نواز شریف کی بیرون ملک روانگی کا تنازعہ سے متعلق تازہ ترین معلومات