Live Updates

مولانا بات لاشوں کی سیاست پر لے آئے ہیں تو ان کی جدوجہد کے نتائج کا اندازہ لگانا مشکل نہیں ' ہمایوں اختر خان

ایک تیر سے کئی شکار کرنے کی منصوبہ بندی کر کے آئے تھے ،تمام تدبیریں ان کے ا پنے گلے پڑ گئی ہیں ' سینئر مرکزی رہنما ء

ہفتہ نومبر 13:52

مولانا بات لاشوں کی سیاست پر لے آئے ہیں تو ان کی جدوجہد کے نتائج کا ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 09 نومبر2019ء) پاکستان تحریک انصاف کے سینئر مرکزی رہنما و سابق وفاقی وزیر ہمایوں اختر خان نے کہا ہے کہ مولانا فضل الرحمان بات لاشوں کی سیاست پر لے آئے ہیں تو ان کی جدوجہد کے نتائج کا بخوبی اندازہ لگایا جا سکتا ہے ، مولانا ایک تیر سے کئی شکار کرنے کی منصوبہ بندی کر کے آئے تھے لیکن تمام تدبیریں ان کے اپنے ہی گلے پڑ گئی ہیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے موجودہ سیاسی حالات کے موضوع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر تحریک انصاف کے رہنما اور کارکنان بھی موجود تھے۔ ہمایوں اختر خان نے کہا کہ پہلے واضح کر چکے ہیں کہ وزیر اعظم عمران خان کے استعفے پر قطعاً کوئی بات نہیں ہو گی اور استعفے کے خواب دیکھنے والے احمقوں کی جنت میں رہتے ہیں۔

(جاری ہے)

وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ سارے حلقے کھولنے کیلئے تیار ہیں کیا اس سے بڑی پیشکش کی جا سکتی ہی ۔

اصل میں مولانا فضل الرحمان حکومت کو نہیں بلکہ اپوزیشن کی دیگر جماعتوں کو مسل دکھا رہے ہیں جس سے ہمیں کوئی سروکار نہیں۔ موجودہ حالات میں ملک کسی بھی طرح کے انتشار کا متحمل نہیں ہو سکتا اس لئے مولانا فضل الرحمان اپنی سر گرمیوں پر نظر ثانی کریں۔ انہوں نے کہا کہ مولانا فضل الرحمان جذباتی اور مظلوموں والی تقاریر کر کے مجمع کو اپنے ساتھ رکھنا چاہتے ہیں جو سب کو نظر آرہا ہے ، اگر بات لاشوں کی سیاست پر آ گئی ہے تو اس سے انتشار مارچ والوں کی جدوجہد کے نتائج کا بخوبی اندازہ لگایا جا سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت ملک کی خاطر با معنی مذاکرات میں سنجیدہ ہے لیکن مولانا فضل الرحمان ٹائم پاس کر رہے ہیں جس کاملک کو نقصان ہو رہا ہے۔ وزیر اعظم عمران خان واضح کہہ چکے ہیں کہ ہمیں دھاندلی کے الزامات کی تحقیقات کے لئے عدالتی یا پارلیمانی کمیشن پر کوئی اعتراض نہیں سارے حلقے کھول لیں لیکن اس پیشکش کے بعد انتشار مارچ والے پتلی گلی کی تلاش میں ہیں۔
مولانا فضل الرحمان کا دھرنا ختم سے متعلق تازہ ترین معلومات