ماہی گیروں کی تربیت سے بہتر نتائج حاصل کیے جا سکتے ہیں، فشریز کی بہتری کی پالیسی تیار ہے بس عملدر آمد کرنا ہے،علی زیدی

میری ٹائم نے لوگوں کو امیر کرنے کی فیکٹری لگائی ہوئی تھی،ہم نے آکر کے پی ٹی میں پلاٹوں کی الاٹمنٹ بند کردی ہے، وفاقی وزیربرائے بحری امور

پیر دسمبر 15:47

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 02 دسمبر2019ء) وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی نے کہاہے کہ ماہی گیروں کی تربیت سے بہتر نتائج حاصل کیے جا سکتے ہیں، فشریز کی بہتری کی پالیسی تیار ہے بس عملدر آمد کرنا ہے، میری ٹائم نے لوگوں کو امیر کرنے کی فیکٹری لگائی ہوئی تھی،ہم نے آکر کے پی ٹی میں پلاٹوں کی الاٹمنٹ بند کردی ہے۔پیرکومقامی ہوٹل میںٹونا کمیشن کے حوالے سے بین الاقوامی کانفرنس کاانعقاد کیاگیا،جس میں بھارت سمیت 15 ممالک کے مندوبین نے شرکت کی۔

وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی نے بھی تقریب میں شرکت کی اور شرکا سے خطاب کیا۔اپنے خطاب میں علی زیدی نے کہاکہ 22 ویں سیشن میں وفود کو پاکستان آمد پرخوش آمدید کہتا ہوں، سب سے پہلے ہمیں درپیش چیلنجز کی طرف دیکھنا ہوگا، ہمیں چیلنجز سے نمٹنے کے لیے اقدامات کرنا ہوں گے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ ماہی گیروں کی تربیت سے بہتر نتائج حاصل کیے جا سکتے ہیں، فشریز کی بہتری کی پالیسی تیار ہے عملدر آمد کرنا ہے۔

باتیں ہو رہی ہیں فشریز تباہ ہورہی ہیں، تباہ نہیں ہورہیں بہتری کی طرف جارہی ہیں۔وفاقی وزیر نے کہاکہ گزشتہ دس سالوں فشریز کے حوالے سے کوئی کام نہیں ہوا ہمارے پاس مچھلی کی برآمد کا وسیع مواقع موجود ہے قران مجید میں بلو اکانامی کا زکر ہے ہم اس سیکٹر پر خصوصی توجہ دے رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ پالیسی پر عملدر آمد کی اسٹریجی کی طرف بڑھ رہے ہیں، فنڈز کی کمی سمیت کئی چیلنجز درپیش ہیں۔

آزاد تجارتی معاہدہ پاکستان اور چین میں لازوال رشتے کا مظہر ہے۔انہوں نے کہا کہ آنے والے دنوں میں سی پیک اور پاک چین دوستی پر اور بھی اچھی خبریں آئیں گی۔ دونوں ملکوں کے عوام اور دوستوں کے لیے اچھی خبر ہے۔اس موقع پر علی زیدی نے کہاکہ میری ٹائم نے لوگوں کو امیر کرنے کی فیکٹری لگائی ہوئی تھی،ہم نے آکر کے پی ٹی میں پلاٹوں کی الاٹمنٹ بند کردی،جو کچھ کررہے ہیں، پاکستان کیلئے کررہے ہیں۔