حکومتیں مافیاز کی سرپرستی اور چین کی بانسری بجانے سے قومی سوچ اور عوام ہمدردی سے چلتی ہیں ، نیئر حسین بخاری

قومی خزانے پر ڈاکہ زنی کرکے زاتی تجوریاں بھرنے والوں کے سرپرستوں سے بھی قوم پوری طرح آگاہ ہے، سیکرٹری جنرل پیپلز پارٹی کا پیان

جمعرات اکتوبر 13:21

حکومتیں مافیاز کی سرپرستی اور چین کی بانسری بجانے سے قومی سوچ اور عوام ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 29 اکتوبر2020ء) سیکرٹری جنرل پاکستان پیپلز پارٹی سید نیر حسین بخاری نے کہا ہے کہ حکومتیں مافیاز کی سرپرستی اور چین کی بانسری بجانے سے قومی سوچ اور عوام ہمدردی سے چلتی ہیں ۔اپنے بیان میںنیئر حسین بخاری نے کہاکہ کابینہ اجلاس میں وزیراعظم کے اردگر موجود ایک ایک سرکاری جیب کترے کو قوم خوب جانتی اور پہچانتی ہے۔

انہوںنے کہاکہ قومی خزانے پر ڈاکہ زنی کرکے زاتی تجوریاں بھرنے والوں کے سرپرستوں سے بھی قوم پوری طرح آگاہ ہے۔انہوںنے کہاکہ آٹا چینی پٹرول ڈالر ادویات مافیا نے عوام کی جیبوں پر سرکاری سہولت کاری میں ڈاکے ڈالے ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ آٹا چینی پٹرول ڈالر ادویات چوروں کا احتساب سے بالاتر ہونا سوالیہ نشان ہے۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ عوام کا جینا دوبھر کرنے کے زمہ داران اپنے جرائم کا ملبہ بیوروکریسی پر ڈال کر اپنے جرائم سے مبرا نہیں کو سکتے۔

انہوںنے کہاکہ نام نہاد معاشی اقتصادی مسیحا مالیاتی شراکتی مافیاز کے مددگار اور سہولت کار ثابت ہوئے ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ ملک میں مہنگائی اس وقت خطے میں سب سے زیادہ ہے،اشیاء ضروریہ کی قیمتیں ملکی تاریخ کی بلند سطح پر ہیں۔ انہوںنے کہاکہ جعلی حکمران کو لگ پتہ گیا ہے کہ لوگوں کا اسلام آباد کی طرف بڑھتاسمندر انکو بہا لے جائیگا۔ انہوںنے کہاکہ مہنگائی،بیروزگاری،معاشی بدحالی کیخلاف تحریک کااغاز ہو گیا ہے ،بے روزگاری مہنگائی بھوک افلاس سے تنگ عوام حکمرانوں سے نجات چاہتی ہے۔

انہوںنے کہاکہ خوشحال پاکستان کے دعویداروں نے معیشت بدحال کر دی ہے،ملکی معیشت بین الاقوامی مالیاتی اداروں کے چنگل میں دے دی گئی ہے،شہری بجلی گیس بل اور ٹیکس ادا کرنے سے مجبور کر دیئے گئے ہیں۔