فیصل آباد ، سموگ سے نپٹنے کیلئے انتظامی و انسدادی اقدامات مکمل ،شہریوں کوبھی مضر اثرات سے بچنے کیلئے احتیاطی تدابیر پر عمل کی ہدایت

جمعرات 21 اکتوبر 2021 15:33

فیصل آباد ، سموگ سے نپٹنے کیلئے انتظامی و انسدادی اقدامات مکمل ،شہریوں ..
فیصل آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 21 اکتوبر2021ء) حکومت پنجاب کی ہدایات پر بدلتے ہوئے موسم میں ممکنہ سموگ کے خطرہ سے نپٹنے کیلئے متعلقہ محکموں کی طرف سے بھر پور انتظامی و انسدادی اقدامات کئے گئے ہیں تاہم سموگ کی صورت میں اس کے مضر اثرات سے بچنے کیلئے شہری احتیاطی تدابیر پر عملدرآمد کریں تاکہ صحت کا تحفظ کیا جا سکے۔ ڈویژنل کمشنرفیصل آباد زاہد حسین نے ایک اجلاس کے دوران کہا کہ سردی کے موسم میں دھند اور دھواں کی آمیزش سے ماحول میں سموگ کی صورتحال انسانی صحت کیلئے نقصان دہ ہو سکتی ہے جس سے بچاؤ کی احتیاطی تدابیر کے بارے میں زیادہ سے زیادہ آگاہی بہترین اقدام ہے۔

انہوں نے طالب علموں سے کہا کہ وہ اپنے خاندانوں کے افراد کے علاوہ محلے داروں اور اردگرد کے افراد کو سموگ کے مضر اثرات سے بچنے کے طریقوں سے آگاہ کریں۔

(جاری ہے)

انہوں نے بتایا کہ کوڑا کرکٹ کو جلانے و دھواں دینے والی گاڑیوں کے چلنے پر پابندی اور اینٹوں کے بھٹوں کی بندش کے علاوہ گردوغبار کے تدارک کیلئے اقدامات کئے گئے ہیں تاکہ شہری اپنے اردگرد کے ماحول کو صاف رکھیں اور خشک مٹی والی جگہ پر پانی کا چھڑکاؤ کریں۔

ڈویژنل کمشنر نے موسمی تغیرات کے نقصانات پر قابو پانے کیلئے حکومت کے صحیح سمت اقدامات اور پالیسیوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ زیادہ سے زیادہ شجرکاری اور درختوں کی حفاظت سے موسمی تبدیلیوں کے منفی اثرات پر قابو پایا جا سکتا ہے۔ انہوں نے محکمہ تعلیم کے افسران سے کہا کہ وہ سموگ سمیت دیگر سماجی مسائل پر قابو پانے کیلئے آگاہی پروگرامز کا سلسلہ مستقل بنیادوں پر جاری رکھیں۔

انہوں نے کہا کہ موسمیاتی خرابیوں کا بروقت ادراک کیا گیا ہے کیونکہ مستقبل میں ان چیلنجز کا مقابلہ پوری تیاری کے ساتھ کیا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سموگ کی صورتحال میں صحت کے بچاؤ کیلئے ہر گھر میں احتیاطی اقدامات ضرور کئے جائیں۔ انہوں نے کہا کہ دھرتی کا ماں کی طرح خیال رکھا جائے تاکہ اسکے تحفظ سے آئندہ نسلوں کا ماحول خوشگوار اور سازگار رہے۔

انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کے ویژن کے مطابق ماحولیاتی تحفظ حکومت کے ایجنڈے میں سرفہرست ہے اور سر سبز پاکستان کیلئے ایسے اقدامات کئے جارہے ہیں جن کی ماضی میں مثال نہیں ملتی۔ انہوں نے کہا کہ عوامی نمائندے ممکنہ سموگ سے متعلق آگاہی اور انسدادی اقدامات کو کامیاب بنانے میں اپنا بھر پور کردار ادا کریں گے۔ ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر برائے وبائی امراض محکمہ صحت ڈاکٹر ذوالقرنین نے سموگ کی وجوہات، احتیاطی تدابیر اور مثاترین کیلئے علاج معالجے کے بارے میں آگاہ کیا اور کہا کہ سموگ کے دوران گھروں کی کھڑیاں اور دروازے بند رکھیں، باہر نکلنے کیلئے ماسک استعمال کریں اور زیادہ پانی پئیں۔

علاوہ ازیں ہاتھ، چہرہ ناک اور آنکھوں کو باربار دھوئیں، گھروں میں صفائی کیلئے جھاڑو کے استعمال کی بجائے گیلا کپڑا استعمال کریں۔