ائیر چیف مارشل سہیل امان کی پیشہ ورانہ خدمات کا اعتراف

امریکی حکومت کی طرف سے اعلی ترین ملٹری ایوارڈ لیجن آف میرٹ سے نوازا گیا ذاتی طور پر ائیر چیف مارشل سہیل امان کی جانب سے کیے گئے اقدامات نے دہشت گردی کے خلاف عالمی جنگ کی کامیابی میں اہم کردار ادا کیا، سربراہ امریکی فضائیہ امریکی کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل جیفری ایل ہیریجین نے پاک فضائیہ کے سربراہ سے ان کے دفتر میں ملاقات کی، دونوں معزز شخصیات نے باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا

پیر مارچ 21:26

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ پیر مارچ ء)پاک فضائیہ کے سربراہ ائیر چیف مارشل سہیل امان کو ان کی پیشہ ورانہ خدمات کے اعتراف میں امریکی حکومت کی طرف سے اعلی ترین ملٹری ایوارڈ لیجن آف میرٹ سے نوازا گیا۔اس سلسلے میں ائیر ہیڈ کوارٹرز میں سادہ اور پروقار تقریب ہوئی جس میں امریکی فضائیہ کے سربراہ کی جانب سے کمانڈر امریکی ائیر فورس سینٹرل کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل جیفری ایل ہیریجین نے پاک فضائیہ کے سربراہ کو یہ اعزاز عطا کیا۔

تقریب میں امریکی فضائیہ کے چیف آف اسٹاف جنرل ڈیوڈ ایل گولڈ فین نے وڈیو لنک کے ذریعے شرکت کی۔یہ اعزاز پاک فضائیہ کے سربراہ کو ان کی جرت مندانہ قیادت، دور اندیشی اور دہشت گردی کے خلاف بین الاقوامی جنگ میں غیر معمولی عزم و استقلال ،علاقائی و عالمی امن، استحکام یقینی بنانے کے لیے کی گئی کاوشوں کے اعتراف میں دیا گیا ہے۔

(جاری ہے)

ایوارڈ پاک فضائیہ کے سربراہ کی جانب سے دونوں ممالک کی فضائی افواج کے مابین باہمی تعاون کے فروغ کے لیے کیے گئے اقدامات کا بھی اعتراف ہے۔

امریکی فضائیہ کے سربراہ نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ائیر چیف کے عزم اور پاک فضائیہ کی آپریشنل صلاحیتوں میں اضافے کے لیے کیے گئے اقدامات کی تعریف کی جو خطے میں امن و استحکام کی واپسی کو ممکن بنانے میں مدد گار ثابت ہوئے۔ امریکی فضائیہ کے سربراہ نے مزید کہا کہ ذاتی طور پر ائیر چیف مارشل سہیل امان کی جانب سے کیے گئے اقدامات نے دہشت گردی کے خلاف عالمی جنگ کی کامیابی میں اہم کردار ادا کیا۔

بعد ازاں امریکی کمانڈر لیفٹیینٹ جنرل جیفری ایل ہیریجین نے پاک فضائیہ کے سربراہ سے ان کے دفتر میں ملاقات کی جس دوران دونوں معزز شخصیات نے باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا۔ ملاقات کے دوران ائیر چیف نے دونوں فضائی افواج کے درمیان باہمی تعاون کو مزید بڑھانے کے لیے اپنے عزم کا اعادہ کیا۔۔

متعلقہ عنوان :

Your Thoughts and Comments