پنجاب بھر میں اسلحہ لائسنسوں کی کمپیوٹرائزیشن کے حوالے سے حکومت پنجاب اور نادرا کے درمیان معاہدے کی توسیع

چیئرمین نادرا عثمان یوسف مبین اور ایڈیشنل چیف سیکرٹری ہوم اعظم سلمان نے 2020 تک کیلئے توسیعی معاہدے پر دستخط کئے

ہفتہ مئی 21:36

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ ہفتہ مئی ء)حکومت پنجاب اور نیشنل ڈیٹا بیس رجسٹریشن اتھارٹی (نادرا) کے درمیان پنجاب بھر میں اسلحہ لائسنس کی کمپیورٹرائزیشن کے کنٹریکٹ میں تین سال کی توسیع کا معاہدہ طے پاگیا۔اس حوالے سے سول سیکرٹریٹ میں ایک اہم اجلاس چیف سیکرٹری پنجاب کیپٹن (ر) زاہد سعید کی صدارت میں منعقد ہوا۔

اجلاس میں امن و امان کے حوالے سے کیبنٹ کی سب کمیٹی کے اراکان نے شرکت کی ۔ایڈیشنل چیف سیکرٹری اعظم سلمان خان، آئی جی پنجاب کیپٹن (ر) عارف نواز ، سی سی پی او لاہور امین وینس ، سپیشل سیکرٹری ہوم کے علاوہ جوڈیشری اور محکمہ داخلہ کے اعلی افسران بھی اس موقع پر موجود تھے ۔اجلاس میں نیشنل ڈیٹا بیس رجسٹریشن اتھارٹی کے وفد کی قیادت چیئرمین نادرا عثمان یوسف مبین نے کی جبکہ ان کے ہمراہ ڈی جی پراجیکٹ نادرا ذوالفقار علی ، کرنل ایم جعفر ، ڈائریکٹر پراجیکٹس وریام شفقت او ر پراجیکٹ مینجر عمران ملک شامل تھے ۔

(جاری ہے)

اس موقع پر اسلحہ لائسنسوں کی کمپیوٹرائزیشن کے معاہدے کو سال 2020 تک تین سال کے لئے توسیع دی گئی ۔ابتدائی معاہدہ اس سے قبل 2017 ء تک کیلئے طے پایاتھا ۔جس کے تحت اسلحہ لائسنسوں اور ایکسپولیسو میٹریل کی تجدید اور اجراء کے حوالے سے آرمز ڈیلرز ، مینوفیکچررز اور پنجاب کے اسلحہ بردار نجی اداروں کو جدید سہولیات اور تقاضوں سے ہمکنار کیاگیاہے ۔تفصیلی بریفنگ اور معاہدے کی تفصیلات طے کرنے کے بعد چیئرمین نادرا عثمان یوسف مبین اور ایڈیشنل چیف سیکرٹری ہوم اعظم سلمان خان نے معاہدے کی دستاویزات پر دستخط کئے ۔

Your Thoughts and Comments