ترکی دنیا کا جدید ترین جنگی طیارہ حاصل کرنے والا پہلا اسلامی ملک بننے کے قریب

ترکی فضائی بیڑے کو جدید ترین لڑاکا طیاروں سے لیس کیا جائے گا، امریکی ساختہ ایف 35اے ترک دفاعی صنعت و معیشت کو فائدہ پہنچائے گا،پہلے مرحلے میں 30 طیارے ترک فضائیہ کے سپرد کیے جائینگے

بدھ مئی 22:23

انقرہ(اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ بدھ مئی ء)ترکی جلد ہی جدید ترین لڑاکا طیارے اپنے فضائی بیڑے میں شامل کرے گا،ایف 35اے لڑاکا طیارے سے ترک دفاعی صنعت اور معیشت کو فائدہ پہنچے گا،پہلے مرحلے میں 30 طیارے ترک فضائیہ کے سپرد کیے جائینگے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق دنیا کے جدید ترین لڑاکا طیارے ماہ جون میں ترکی کے پاس ہوں گے۔

ترکی کے پہلے ایف۔35 جنگی طیاروں کی حوالگی میں اب گنتی کے چند ہی دن باقی بچے ہیں۔متحدہ امریکہ سے خریدے گئے ایف۔35 اے لڑاکا طیارے کی نئی تصاویر منظر عام پر آئی ہیں۔دفاعی صنعت کی سیکریٹریٹ نے ترک پرچم بردار ایف۔35 کے لاک ہیڈ مارٹن ٹیکساس تنصیبات سے اڑان بھرنے کے مناظر کو ٹویٹر پر شیئر کیا ہے۔ان مناظر میں طیارے کی دم پر ترک پرچم کی موجودگی باعث ِ توجہ ہے۔

(جاری ہے)

ترکی پہلا ایف۔35 لڑاکا طیارہ 21 جون کو امریکہ میں منعقدہ ایک تقریب کے ساتھ حاصل کرے گا۔پائلٹوں کی تربیت اور دوسرے طیارے کی بھی حوالگی کے بعد انہیں ترکی لایا جائیگا۔یہ طیارہ 2019 کے موسم ِ خزاں سے ترکی کے آسمانوں میں دکھائی دے گا۔اس طیارے کی خرید سے ترک دفاعی صنعت اور معیشت کو اہم سطح کا فائدہ پہنچے گا۔واضح رہے کہ ترکی نے ایک 100 عدد ایف۔35 لینے کی منصوبہ بندی کر رکھی ہے اور پہلے مرحلے میں 30 طیارے ترک فضائیہ کے سپرد کیے جائینگے۔

متعلقہ عنوان :

Your Thoughts and Comments