چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کاجناح ہسپتال لاہور کا دورہ

سہولیات کی عدم فراہمی پر ایم ایس اور علامہ اقبال میڈیکل کالج کے پرنسپل کی سرزنش کردی ۔۔ہسپتال کی ایم آر ائی مشین خراب دیکھ کر چیف جسٹس کا سخت اظہار برہمی‘اسے فوری ٹھیک کروائیں ورنہ آپ کو ٹھیک کر دوں گا‘ چیف جسٹس

اتوار جون 21:00

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ اتوار جون ء) چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کاجناح ہسپتال لاہور کا دورہ‘ سہولیات کی عدم فراہمی پر ایم ایس اور علامہ اقبال میڈیکل کالج کے پرنسپل کی سرزنش کردی ‘ چیف جسٹس کے دورے کے دوران اس وقت دلچسپ صورتحال پیدا ہوگئی جب ایمرجنسی کے اے سی بند ہوگئے۔تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے سپریم کورٹ رجسٹری لاہور میں اہم کیسز کی سماعت کے بعد جناح ہسپتال لاہور کا دورہ کیا اورمریضوں کو فراہم کی جانے والی سہولیات کا جائزہ لیا۔

چیف جسٹس نے ہسپتال کے مختلف وارڈز کا دورہ کیا اور مریضوں سے مسائل دریافت کیے۔ چیف جسٹس نے ایمرجنسی آپریشن تھیٹر کا دورہ بھی کیا، اس موقع پر ایمرجنسی کے اے سی بند ہوگئے۔

(جاری ہے)

ایک بیڈ پر 2، دو مریض لٹانے پر چیف جسٹس نے انتظامیہ کی سرزنش بھی کی۔ علامہ اقبال میڈیکل کے پرنسپل نے مشینوں سے متعلق بریفنگ دی ، چیف جسٹس نے ایم آر آئی مشین خراب ہونے پر ایم ایس عاصم حمید اور پرنسپل راشد ضیا کی سرزنش کی مریضوں نے شکایات کے انبار لگا دئیے ۔

ہسپتال کی ایم آر ائی مشین خراب دیکھ کر چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ اسے فوری ٹھیک کروائیں ورنہ آپ کو ٹھیک کر دوں گااس موقع پر چیف جسٹس نے ہسپتال کے مختلف شعبوں کا دورہ کیا اور انتظامات کا جائزہ لیا ان کی آمد پر جنرل ہسپتال کی لفٹ خراب ہو گئی جبکہ ایمرجنسی کا اے سی بھی بند ہو گیامناسب دیکھ بھال نہ ہونے وجہ سے چیف جسٹس نے ایم ایس کی سرزنش کی اور کہا کہ تمام مسائل کو جلد از جلد حل کرائیں۔

Your Thoughts and Comments