امریکی سینیٹرجان مکین کی بیماری کا مذاق اڑانے والے ٹرمپ کی مشیر مستعفی

کیلی سیڈلر اب صدر کے ایگزیکٹو آفس کی ملازم نہیں،یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ استعفیٰ لیا گیا یاخوددیا،وائٹ ہائوس

بدھ جون 12:40

واشنگٹن(اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ بدھ جون ء)امریکی سینیٹر جون میک کین کی بیماری کا مذاق اڑانے والی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی معاون کیلی سیڈلر مستعفی ہوگئیں۔امریکی ٹی وی کے مطابق وائٹ ہائوس کے پرنسپل ڈپٹی پریس سیکریٹری راج شاہ نے ایک بیان میں تصدیق کی ہے کہ کیلی سیڈلر اب صدر کے ایگزیکٹو آفس کی ملازم نہیں۔

ابھی تک یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ سیڈلر سے استعفیٰ لیا گیا ہے یا انہوں نے خود استعفیٰ دیا ہے۔

(جاری ہے)

امریکی ٹی وی کے مطابق کیلی نے ریپبلیکن سینیٹر جون میکین کی بیماری کا مذاق اڑایا تھا، جو کافی عرصے سے کینسر کے عارضے میں مبتلا ہیں۔سیڈلر نے ایک میٹنگ میں میک کین کا مذاق اڑاتے ہوئے کہا تھا کہ جینا ہوسپل کی بطور سی آئی اے ڈائریکٹر نامزدگی میک کین کیلئے اس لیے کوئی معنی نہیں رکھتی کہ وہ مر رہے ہیں۔سیڈلر نے عوام کے سامنے اپنے ان الفاظ پر معذرت نہیں کی تھی، بعد ازاں سخت تنقید کا نشانہ بننے پر انہوں نے فون پر میک کین کی صاحبزادی میگھن سے معذرت کر لی تھی، تاہم اس کے بعد میگھن نے سوال اٹھایا تھا کہ سیڈلر اب تک وائٹ ہاوس کی ملازمت پر برقرار کیوں ہیں۔

Your Thoughts and Comments