اوگراکرپشن سکینڈل کے مرکزی ملزم توقیرصادق سے تفتیش کرنے والے نیب افسرذہنی دباوٴکے باعث علاج کیلئے ہسپتال پہنچ گئے

منگل فروری 07:40

لاہور( اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔4فروری۔2013ء)اوگراکرپشن سکینڈل کے مرکزی ملزم توقیرصادق سے تفتیش کرنے والے نیب افسرذہنی دباوٴکے باعث علاج کیلئے ہسپتال پہنچ گئے ۔

(جاری ہے)

نجی ٹی وی کے مطابق نیب کے ڈپٹی ڈائریکٹروقاص احمدخان جواوگراکرپشن کیس کی تحقیق کررہے ہیں انہیں نامعلوم افرادکی جانب سے توقیرصادق کوبے گناہ قراردینے کیلئے دھمکیاں بھی موصول ہورہی ہیں اوروہ شدیدذہنی دباوٴکاشکارہیں ۔

وہ گزشتہ روزاپنے علاج کیلئے لاہورکے میوہسپتال کے نیوروسرجری وارڈمیں آئے ڈاکٹروں نے انہیں آرام کامشورہ دیاواضح رہے کہ اس سے قبل نیب کے تفتیشی افسرکامران فیصل شدیددباوٴکے باعث خودکشی کرچکے ہیں ادھراسلام آبادہائیکورٹ نے توقیرصادق کی درخواست ضمانت پروکلاء کوحتمی دلائل پیش کرنے کاحکم دیدیااور6فروری کوحتمی چالان پیش کرنے کی بھی ہدایت کردی ہے ۔

متعلقہ عنوان :

Your Thoughts and Comments