انسانی سرمائے کے مؤثر استعمال سے بہتر قابل عمل معیشت سازی میں کلیدی کردار ادا کیا جا سکتا ہے،

قومیں بنانے کیلئے صرف حکومتیں ہی نہیں عوام اور سماجی اصلاحات میں کردار ادا کرنے والے تمام اداروں کے کردار کی ضرورت ہے، موجودہ تعلیمی پیمانے میں تبدیلی کرتے ہوئے اسے علمی استعداد کے مطابق بنانا ہوگا صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کا نیشنل اکیڈمی آف ہائیر ایجوکیشن کے افتتاح کے موقع پر تقریب سے خطاب

انسانی سرمائے کے مؤثر استعمال سے بہتر قابل عمل معیشت سازی میں کلیدی ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 12 جون2019ء) صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے معیاری تعلیم کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ انسانی سرمائے کے مؤثر استعمال سے بہتر قابل عمل معیشت سازی میں کلیدی کردار ادا کیا جا سکتا ہے۔ بدھ کو نیشنل اکیڈمی آف ہائیر ایجوکیشن کے افتتاح کے موقع پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر مملکت نے کہا کہ جن ممالک نے شاندار ترقی پائی ہے وہ اس حقیقت سے آگاہ ہیں کہ آخر کار تعلیم سے ہی ترقی اور غربت کے خاتمہ کے اہداف حاصل کرسکتے ہیں۔

صدر مملکت نے کہا کہ مستند ابلاغی مہارتوں سے طالب علموں تک علم کی منتقلی کیلئے اچھی تدریسی تعلیم ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ مصنوعی ذہانت متعارف ہونے کے باوجود انسانی عنصر میں تدریس کی اہمیت مروجہ ہے۔

(جاری ہے)

صدر مملکت نے پرائمری اور اعلیٰ تعلیم کی سطح پر اساتذہ کی استعداد کار میں اضافہ کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ان کی ترقی کی بنیاد سنیارٹی اور اہلیت ہونی چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ تعلیمی پیمانے جن میں طالب علموں کی کارکردگی جانچی جاتی ہے ضرورت ہے، اس میں تبدیلی کرتے ہوئے اسے علمی استعداد کے مطابق بنانا ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ قومیں بنانے کیلئے صرف حکومتیں ہی نہیں بلکہ عوام اور سماجی اصلاحات میں کردار ادا کرنے والے تمام اداروں جن میں مسجد، ٹیلی ویژن اور سوشل میڈیا شامل ہے، کے کردار کی ضرورت ہے۔

صدر مملکت نے کہا کہ گذشتہ دو دہائیوں سے عالمی معیشت میں نمایاں تبدیلی ہوئی ہے، تیزی سے تبدیل ہوتی ہوئی دنیا کے چیلنجوں سے نمٹنے کیلئے طالب علموں کو بہتر علمی مہارت سے لیس کرنا ہوگا۔ صدر مملکت نے کہا کہ حکومت معیاری اعلیٰ تعلیم کو یقینی بنانے کیلئے پرعزم ہے۔ انہوں نے توقع ظاہر کی کہ نیشنل اکیڈمی آف ہائیر ایجوکیشن اعلیٰ معیار کے انسانی سرمائے کی ترقی کے فروغ کیلئے کردار ادا کرے گی، نیشنل اکیڈمی برائے ہائیر ایجوکیشن سکل ڈویلپمنٹ اور استعداد کار کیلئے ایک بہترین مرکز ثابت ہوگی۔

اس کا بنیادی مقصد تدریس اور تحقیق کے ساتھ ساتھ اکیڈمک گورننس اور اعلیٰ تعلیمی اداروں میں لیڈر شپ بڑھانا ہے۔ وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا کہ حکومت ملک میں تعلیم کی بہتری کیلئے اقدامات اٹھا رہی ہے اور اس نے مختلف تدریسی پروگراموں کیلئے وسائل مختص کئے ہیں۔ چیئرمین ہائیر ایجوکیشن کمیشن ڈاکٹر طارق بنوری نے قوم سازی میں معیاری تعلیم کی اہمیت پر روشنی ڈالی۔

Your Thoughts and Comments