Petha Kaddu - Article No. 1925

پیٹھا کدو - تحریر نمبر 1925

منگل 11 اگست 2020

Petha Kaddu - Article No. 1925
دیبا جاوید
غذائیت سے بھر پور پیٹھا کدو بطور غذا اور دوا صدیوں سے استعمال ہو رہا ہے۔اس میں حرارے بہت کم ہوتے ہیں۔اردو میں اسے پیٹھا کدو یا سفید کدو کہتے ہیں جبکہ انگریزی میں اس کے کئی نام ہیں جیسےWinter Melon,Ash Gourd,White Gourdاور White Pumpkinوغیرہ۔اس کا لاطینی نامBenincasa Ceriferaاور اس کا تعلق Cucurbitaceaeفیملی ہے۔ زمانہ قدیم سے اسے انڈیا‘چائنا‘ملائیشیا‘نیو گنی میں کاشت کیا جا رہا ہے۔

چائنا میں یہ 2000سال سے استعمال ہو رہا ہے وہاں اسے Preserving Gourdکہتے ہیں۔پیٹھا کدو کا پھل‘پھول‘بیج‘پتے‘جڑ سب ہی غذائی و ادویاتی طور پر استعمال ہوتے ہیں۔انڈیا‘ پاکستان میں اسے بطور سبزی استعمال کیا جاتا ہے۔اس سے کینڈی یا مربہ بھی بنتا ہے۔چائنا اور تائیوان میں اس سے سوپ بنایا جاتا ہے۔

(جاری ہے)

اس سے مشروب بھی بنتا ہے جو Winter Melon Teaکے نام سے مارکیٹ میں دستیاب ہے۔

پھل 25سے 40 سینٹی میٹر لمبا ہوتا ہے اس کی شکل لمبوتری سے گول ہوتی ہے اور اندر کا گودا سفید اور Spongyہوتا ہے۔کچے گودے کا ذائقہ میٹھا ہوتا ہے جبکہ پکا ہوا بے ذائقہ Blandہوتا ہے۔باہر کا چھلکا سبز اور سخت ہوتا ہے کیونکہ اس کے اوپر قدرتی ویکس کوننگ ہوتی ہے جس کی وجہ سے پھل کی شیلف لائف بڑھ جاتی ہے۔اسے 12ماہ تک بغیر فریج میں رکھے سٹور کیا جا سکتا ہے۔

قدرتی ویکس کوننگ کی وجہ سے اسے Wax Gourdکا نام بھی دیا جاتا ہے۔اس کا وزن 2سے 50کلو گرام تک ہوتا ہے۔
پھل کی خصوصیات
مقوی باؤ باری کے بخار کو دور کرتا ہے‘دافع کرم اور امعا‘قبض کشا‘مسکن‘پیشاب آور،دافع کینسر،مخرج بلغم‘دافع بخار اور ٹانک ہے۔میٹھا کدو Natural Healenکہا جاتا ہے۔آئیو رویدک اور روایتی مشرقی ادویات میں اسے بطور ٹانک استعمال کروایا جاتا ہے۔

آئیورویدک میں دماغی کمزوری اور اعصابی تکالیف مرگی‘Insanity Parabolaکے علاج کے لئے بھی استعمال ہوتا ہے۔پیٹھا کدو میں تقریباً 90فیصد پانی ہے لہٰذا اس کے استعمال سے وزن نہیں بڑھتا کیونکہ میٹا بولک ریٹ(استحالہ)بڑھاتا ہے اور چینی کو چکنائی میں بدلنے سے روکتا ہے۔جبکہ اس کے گودے اور چینی سے بنی سویٹ ڈش (حلوہ)جسمانی کمزوری اور تھکن کو دور کرتی ہے اور وزن بڑھاتی ہے)پیٹھا کدو خون کی بیماریاں سانس کی تکالیف(دمہ)اور گردے کی پتھری کے علاج کے لئے بھی مفید پایا گیا ہے۔

معدے کی تیزابیت کو ختم کرتا ہے۔پیشاب آور ہے۔بلڈ پریشر کو بڑھنے نہیں دیتا اور فاسد مادوں کو نکالتا ہے۔
تحقیق کے مطابق پیٹھا کدو کا الکوحل میں ایکسٹریکٹ Antinociceptiveاور دافع بخار اثرات رکھتا ہے۔خون کی کمی کے علاج کے لئے پتوں اور پھل کا خشک سفوف Buttermilkکے ساتھ ایک چائے کا چمچ استعمال کروایا جاتا ہے اور اس کا میتھا لولک ایکسٹریکٹ ڈائریا (اسہال)کو ختم کرنے میں موثر ثابت ہوا ہے۔

تحقیق سے یہ بھی ثابت ہوا ہے کہ پھل میں مانع تکسیدی مرکبات پائے جاتے ہیں جو الزائمر بیماری سے بھی محفوظ رکھتے ہیں۔ایک تحقیق کے مطابق پھل میں دافع کینسر Terpenesبھی پائے جاتے ہیں۔چائنا میں پیٹھا کدو کا استعمال کاسمیٹکس میں خاصا مقبول ہے۔یہ چہرے کی جھریوں اور داغوں Blemishesکو دور کرتا ہے اور جلد کو نمی اور نرمی دیتا ہے۔انڈیا میں السر کے علاج کے لئے اس کے جوس کو استعمال کیا جاتا ہے۔


جوس کی خصوصیات
پیٹھا کدو کا جوس بھی کئی بیماریوں کے علاج کے لئے استعمال کیا جاتا ہے۔مسکن ہے اور بے خوابی کو دور کرتا ہے۔ذیابیطس،بدہضمی اور السر کے علاج کے لئے بہترین ہے۔نہار منہ پینا معدے کی تیزابیت اور سوجن کو دور کرتا ہے۔مرکری Poisoningاور سانپ کے کاٹنے کی صورت میں موثر Antidoteہے۔فلو،کھانسی،بخار اور ناک کے جوف کی سوزش Sinusitisکو کنٹرول کرتا ہے۔

قبض کو ٹھیک کرتا ہے اس کے اس رس کو بالوں میں لگانے سے خشکی ختم ہوتی ہے اور بالوں میں چمک پیدا کرتا ہے۔جوس کا استعمال پیشاب کی جلن کو ختم کرتا ہے ۔مسوڑھوں سے خون آنے کو روکتا ہے۔پیٹھے کدو کے رس سے غرارے کرنا دانتوں و مسوڑھوں کی تکالیف کو دور کرتا ہے۔یہ عمل منہ کے کینسر سے بھی بچاتا ہے۔جوس کا استعمال دماغ کے لئے ٹانک اور بطور اعصابی محرک کام کرتا ہے۔


بیجوں کی خصوصیات
بیجوں میں چکنائی‘پروٹین‘نمکیات‘کاربوہائیڈریٹ‘فائبر اور وٹامنز پائے جاتے ہیں ۔انہیں پیٹھا مغز بھی کہتے ہیں۔بیج مانع سوزش اور پیٹ کے کیڑوں کو ہلاک کرتا ہے‘پیشاب آور‘دافع بخار‘قبض کشا‘مسکن اور ٹانک خوبیاں رکھتے ہیں۔جدید تحقیق کے مطابق بیجوں کے ایکسٹریکٹ میںAntlanglogenicخوبی پائی جاتی ہے۔

بیجوں کا کوکونٹ ملک کے ساتھ استعمال پیٹ کے کیڑوں کو ختم کرتا ہے۔اس کا جوشاندہ کھانسی کے لئے استعمال کیا جاتا ہے۔بیجوں کو ناریل تیل میں ابال لیں یہ بالوں کی نشوونما اور خشکی کو دور کرتا ہے۔جلد پھٹنے پر بھی بیجوں کو لگایا جاتا ہے۔بیج قبض دور کرتے ہیں‘پیشاب آور ہیں۔فاسد مادوں کو نکالتے ہیں۔روایتی چینی معالج کولیسٹرول کم کرنے‘پیشاب اور گردوں کی تکالیف کے لئے بیجوں کو ادویات میں استعمال کرتے ہیں۔ان کی سرد خصوصیات جسمانی حرارت دور کرنے کے لئے مفید ہیں۔بخار اور پیاس کی زیادتی کو بھی ختم کرتے ہیں۔
جڑRoot:
جڑ کا جوشاندہ سوزاکGonorrhoeaکے علاج کے لئے استعمال ہوتا ہے۔
تاریخ اشاعت: 2020-08-11

Your Thoughts and Comments