بند کریں
صحت مضامینغذا اور صحتسنترہ کھانا نہ چھوڑیے

مزید غذا اور صحت

پچھلے مضامین - مزید مضامین
سنترہ کھانا نہ چھوڑیے
بعض افراد سردیوں میں کینو، نارنگی اور سنترہ کھانے سے اجتناب برتتے ہیں۔ ان کاخیال ہے کہ یہ ترش پھل ہیں اور گلے خراب کرنے کا سبب بنتے ہیں ۔ یہ بالکل غلط خیال ہے
تمثیلہ زاہد:
اللہ تعالیٰ نے ہمیں موسم کی مناسبت سے مختلف ذائقوں والے پھل عطا کیے ہیں۔ ہر پھل کی اپنی اہمیت و افادیت ہے۔ ہم کسی پھل کی اہمیت اور افادیت سے انکار نہیں کرسکتے۔ بعض افراد سردیوں میں کینو، نارنگی اور سنترہ کھانے سے اجتناب برتتے ہیں۔ ان کاخیال ہے کہ یہ ترش پھل ہیں اور گلے خراب کرنے کا سبب بنتے ہیں ۔ یہ بالکل غلط خیال ہے، کینو، نارنگی او ر سنترہ ایسے پھل ہیں، جن میں حیاتین ج (وٹامن سی) کی وافر مقدار ہوتی ہے، جو ہمارے لیے بہت فائدہ مند ہے۔سردیوں میں ہم پانی پینا کم کردیتے ہیں۔پانی کی کمی کو پورا کرنے میں بھی یہ پھل اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ بوڑھوں کی یادداشت بہتر کرنے کے لیے سنترہ مفید پھل ہے۔ اس کارس ایسے کو ضرور پینا چاہیے، جن کی یاداشت کم زور ہے۔ سنترہ کولیسٹرول کو کم کرتا ہے ۔ اس میں کیلسیئم۔ فولک ایسڈ اور میگنیزیئم پائے جاتے ہیں، جو بلڈ پریشر کو قابو میں رکھتے ہیں۔ اس میں پوٹاشیئم بھی پایا جاتا ہے، جودل کے نظام کو درست رکھنے میں مدددیتا ہے۔ گھٹیا جیسی بیماری بھی سنترہ کھانے سے دُور ہوجاتی ہے۔ سنترہ جلد کو صحت مند اور جوان بنا دیتا ہے۔ جلد کی شادابی کے لیے اس کے چھلکوں کو بھی خشک کرکے استعمال کیا جاتا ہے ۔ حسن وآرایش کی مختلف مصنوعات میں بھی سنترے کے چھلکوں کو سکھا کر سفوف تیار کرلیتی ہیں۔ چہرے کی جلد کو حیاتین ج کی ضرورت ہوتی ہے اور سنترے میں یہ حیاتین وافر مقدار میں ہوتی ہے، جو جلد کو تندرست اور شاداب رکھتی ہے۔ پھل کوئی سا بھی ہو، روزانہ اعتدال کے ساتھ کھانے سے فائدہ ہوتا ہے۔ ہر موسم کا پھل ضرور کھانا چاہیے۔ موسمی پھل اللہ کی نعمت ہیں۔ ان نعمتوں سے ہمیں لطف اندوز ہونا چاہیے۔ ان نعمتوں میں سنترہ بھی شامل ہے۔ جو سردیوں کی آمد کے ساتھ ہی بازار میں دستیاب ہوجاتا ہے۔ اگر آپ صحت مند اور جوان رہنا چاہتے ہیں تو پھلوں کو اپنی غذاؤں میں ضرور شامل کریں، خاص طور پر وہ پھل جن میں حیاتین ج وافر مقدار میں ہوتی ہیں، کیوں کہ اللہ تعالیٰ نے ان میں بے شمار فوائد رکھے ہیں۔

(0) ووٹ وصول ہوئے