Garmi Se Bachne K Gharelo Totke

گرمی سے بچنے کے گھریلو ٹوٹکے

Garmi Se Bachne K Gharelo Totke
موسم کا ہمارے موڈ اور مجموعی طور پر ہماری صحت پر گہرا اثر پڑ تا ہے۔ گرمی جب شدت اختیار کرتی ہے تو مزاج میں چڑچڑاہٹ تو آہی جاتی ہے ساتھ ہی میں صحت کے حوالے سے بھی مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ ایسی گرمی میں دل چاہتا ہے کہ بس اے سی کے سامنے بیٹھے رہو لیکن پھر بجلی کے بل کی فکر ستانے لگتی ہے۔ گرمی میں خود کو چاق و چوبند اور توانا رکھنے کے لیے قدرتی طریقے اپنائیے جن سے خرچہ بھی نہیں ہوگا اور آپ ترو تازہ بھی محسوس کریں گے۔


بڑے بوڑھے کہتے ہیں کہ دھوپ میں سے آکر پیروں پرپانی ڈالنے سے جسم کا درجہ حرارت معمول پر آجاتا ہے۔ اس کے علاوہ آپ کوئی اچھا لوشن یا ٹونر فرج میں رکھ سکتی ہیں۔ دھوپ سے آکر تھکے ہوئے پیروں پر یہ لگانے سے سکون پہنچے گا۔
فریزر میں پلاسٹک کی بوتل بھر کر رکھیں۔

(جاری ہے)

جب باہر جانا ہو تو ساتھ یہ بوتل رکھ لیں۔ جیسے پانی پگھلے گا آپ کو ٹھنڈا پانی پینے کو ملے گا۔


تمباکو ، سگریٹ اور چائے کا استعمال محدود کر دیں۔ کیفین سے جسم میں اور زیادہ گرمی پیدا ہوتی ہے۔
گرم گرم کھانے سے زیادہ تھوڑے تھوڑے وقفے سے ٹھنڈے پھلوں یا دودھ سے بنی اشیا ء کا استعمال کریں۔
اگر گھر میں اے سی نہ ہو تو دن کا کچھ حصہ کسی ٹھنڈے مال ، تھیٹر یا ایسی جگہ گزاریں جو ٹھنڈی ہو۔
باہر کی سرگرمیوں کو جس حد تک ممکن ہو محدود کر دیں۔

کوشش کریں سب کام صبح سویرے نمٹا دیں یا رات کے وقت جاکر کر لیں۔
بیٹری والے پنکھے اپنے ساتھ رکھنے کی کوشش کریں تاکہ لائٹ جانے کی صورت میں آرام رہے۔
جلدی جلدی نہائیں۔ نہانے کے بعد تولیے سے سکھانے کے بجائے جسم کو پنکھے کے نیچے سکھائیں۔
ایک پانی کا اسپرے فرج میں رکھ دیں۔ جب گرمی زیادہ لگے تو چہرے اور سر پر یہ اسپرے کر لیں۔


پھلوں میں خربوزے، اسٹرا بیری ، کیلے اور بلیو بیری کا استعمال بڑھائیں۔ ان کا جوس یا شیک بنا کر پینابھی فائدے مند ہے۔ ان پھلوں میں موجود پانی جسم کو ڈی ہائیڈریٹ نہیں ہو نے دے گا۔ ان سے جسم کو الیکٹرو لائیٹس حاصل ہونگے جو توانائی بحال رکھیں گے۔
سبزیوں میں بینگن، کھیرے، ٹماٹر اور ہری سبزیوں میں پانی موجود ہوتا ہے۔ انہیں اپنی روز کی غذا کا حصہ بنائیں۔

ان سے گرمیوں میں جسم کی غذائی ضروریات بھی پوری ہو جائیں گی۔
ناریل کا پانی اور لسی ایسے مشروبات ہیں جو گرمیوں میں آسانی سے مل بھی جاتے ہیں اور ذائقے میں بھی مزے کے لگتے ہیں۔ گرمیوں میں ان کا خوب استعمال کریں۔
آیورویدک ماہرین کے مطابق دھوپ سے آکر اگر پیاز کا عرق کانوں کے پیچھے یا سینے پر لگا لیا جائے تو جسم کا درجہ حرارت فوراً نیچے آجا تا ہے۔

اس کے علاوہ پیاز کا استعمال چٹنیوں ا ور سلاد میں بھی بڑھا دیں۔
پودینے یا ہرے دھنیے کے پانی میں تھوڑی سی چینی ملا کر فرج میں رکھ دیں اور جب موقع ہو پی لیں۔ اس کی تاثیر ٹھنڈی ہوتی ہے۔ ہر ے دھنیے کا پانی گرمی سے جلد پر ہونے والی خارش پر استعمال کیا جائے تو بھی فائدہ ہوگا۔
سندل کی لکڑی کو پیس کر پانی میں پیسٹ بنا لیں۔ اسے سینے اور ماتھے پر لگائیں۔ اس کے علاوہ سندل کی لکڑی کے تیل کا ماتھے یا گرمی سے متاثرہ جلد پر استعمال کریں۔
تاریخ اشاعت: 2016-04-15

Your Thoughts and Comments