Ghutne Ka Dard Kam Ho Ga - Article No. 2144

گھٹنے کا درد کم ہو گا - تحریر نمبر 2144

جمعہ 30 اپریل 2021

Ghutne Ka Dard Kam Ho Ga - Article No. 2144
معمر افراد میں آسٹیوپوروسس کی وجہ سے گھٹنے کا درد ہوتا ہے تاہم نوجوان بھی درد کی شکایت کریں تو اس کے معنی یہ ہوئے کہ وہ یا تو کھلاڑی ہیں یا پھر وزن کی زیادتی کا شکار ہیں۔کھیلوں کی وجہ سے بھی جوڑوں کا درد ہو سکتا ہے۔ایسے میں صحت بخش غذاؤں کا استعمال بہتر نتائج دے سکتا ہے۔گھٹنے کا درد عموماً ہلکی پھلکی تکلیف سے شروع ہوتا ہے اور بڑھتے بڑھتے اس وقت ناقابل برداشت ہو جاتا ہے جب تک متاثرہ شخص آرام نہیں کرتا یا ڈاکٹر کی تجویز کردہ ادویات مناسب انداز میں نہیں لیتا۔

ذیل میں ہم علاج بالغذا کے تصور کے مطابق احتیاطی تدابیر اور ان چند صحت بخش غذاؤں کا تذکرہ کر رہے ہیں جنہیں استعمال کرکے آپ گھٹنے کے درد کی کیفیت کو کم کر سکتے ہیں۔
مچھلی
گھٹنے کے درد میں مبتلا رہنے والوں کو چکنی یعنی روغنی مچھلی کھانی چاہئے مثلاً سارڈینز،میکریل،ملیٹ اور ٹیونا ہیں۔

(جاری ہے)

ان مچھلیوں میں اومیگا 3 فیٹی ایسڈز پایا جاتا ہے۔

اومیگا 3 فیٹی ایسڈز میں کئی EPA اور DHA ہوتے ہیں۔یہ کیمیائی مرکبات گھٹنے کی نرم ہڈی کی سوزش اور درد کو کم کرنے میں مدد دیتے ہیں۔ہفتے میں دو سے تین دن مچھلی کھانی بہتر ہے۔
سویا
جوڑوں کی ہڈیوں میں ٹوٹ پھوٹ یا آسٹیوآرتھرائٹس کی وجہ سے درد ہوتا ہے تو سویا پر مبنی خوراک مفید ثابت ہوتی ہے۔سویا پر مبنی غذائیں Isoflavones سے بھرپور ہوتی ہیں۔

یہ نباتاتی ذرائع سے حاصل ہونے والا ایک قسم کا ہارمون ہے۔طبی حلقوں میں یہ بات تسلیم کی جا چکی ہے کہ قدرتی طور پر حاصل ہونے والے Isoflavones میں سوزش کو رفع کرنے کی صلاحیت ہوتی ہے چنانچہ سویا کی پھلیاں،سویا ملک،سویا برگرز اور ٹوفو کو روزمرہ خوراک میں شامل کرنا چاہئے۔
ادرک
گھٹنوں کے آرتھرائٹس میں مبتلا افراد کو ادرک کھانا چاہئے۔

یہ سوزش کو ختم کرتا ہے جس سے گھٹنے کے درد اور سوجن کو افاقہ ہوتا ہے۔سونٹھ یعنی سوکھے ادرک کا استعمال بھی گھٹنے کے درد میں کمی لاتا ہے۔
پالک
پالک میں ایک خاص غذائی جزو Zeaxanthin اور Lutein جیسے اینٹی آکسیڈینٹس گھٹنے کے آسٹیوپوروسس سے تحفظ فراہم کرتے ہیں۔پالک کو کئی گھنٹوں تک پکانے کی کبھی غلطی نہ کریں بلکہ بلانچ کرکے گوشت یا مرغی میں شامل کرکے سات منٹ تک دم پر رکھنے سے ذائقہ دار پالک گوشت تیار ہو سکتا ہے۔اگر پالک کا جوس پیا جائے تو زیادہ مفید ہے۔
پھل
وٹامن C پر مشتمل پھل جوڑوں میں ٹوٹ پھوٹ کو کم کرتا ہے۔تمام سٹرس فروٹس مثلاً مالٹا،موسمی کینو،گریپ فروٹ،پپیتا،کیوی فروٹ اور آم کھانے چاہئیں۔
تاریخ اشاعت: 2021-04-30

Your Thoughts and Comments