بند کریں
صحت صحت کی خبریںریڈ کراس کے زیرانتظام ’’پہلے زندگی: ایمبولینس کو راستہ دیں، زندگی کو راستہ دیں‘‘ کے عنوان ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 07/10/2017 - 14:42:29 وقت اشاعت: 07/10/2017 - 13:37:59 وقت اشاعت: 07/10/2017 - 12:25:48 وقت اشاعت: 06/10/2017 - 18:05:31 وقت اشاعت: 06/10/2017 - 17:57:22 وقت اشاعت: 06/10/2017 - 17:07:09 وقت اشاعت: 06/10/2017 - 16:21:28 وقت اشاعت: 06/10/2017 - 16:05:02 وقت اشاعت: 06/10/2017 - 15:52:41 وقت اشاعت: 05/10/2017 - 15:55:20 وقت اشاعت: 05/10/2017 - 12:59:31

ریڈ کراس کے زیرانتظام ’’پہلے زندگی: ایمبولینس کو راستہ دیں، زندگی کو راستہ دیں‘‘ کے عنوان سے ملک گیر آگاہی مہم کا آغاز

وفاقی وزیر صحت سائرہ افضل تارڑ کی انسانی زندگیاں بچانے کے اہم مقصد کو آگے بڑھانے میں اپنا کردار ادا کرنے والے اداروں کی تعریف

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 اکتوبر2017ء) بین الاقوامی ریڈ کراس کمیٹی کے زیرانتظام ’’پہلے زندگی: ایمبولینس کو راستہ دیں، زندگی کو راستہ دیں‘‘ کے عنوان سے ملک گیر آگاہی مہم کے آغاز کے لئے تقریب کا انعقاد ہوا۔ مقامی سطح پر شروع کی جانے والی مہم دراصل اس مہم کا حصہ ہے جو بین الاقوامی ریڈ کراس کمیٹی کے تحت 30 ممالک میں جاری ہے۔

اس مہم کا مقصد لوگوں کی توجہ طبی سہولیات اور عملہ جات کو درپیش مشکلات اور اس کی سنگینی کی جانب مبذول کرانا ہے۔ پاکستان کی سطح پر جاری مہم 30 معاون اداروں کے تعاون سے چل رہی ہے جو رواں برس کے اختتام تک جاری رہے گی۔ تقریب سے مہمان خصوصی وفاقی وزیر صحت سائرہ افضل تارڑ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ یہ بڑی تکلیف دہ بات ہے کہ آئے روز ہمیں کسی نہ کسی کے بارے میں سننے کو ملتا ہے کہ وہ بروقت ہسپتال نہ پہنچ سکنے کی وجہ سے جانبر نہ ہو سکا۔

ہمیں اس بات کو سمجھنا ہے کہ ایمبولینس محض ایک سواری نہیں ہے بلکہ وہ زندگی اور موت کی کشمکش میں پھنسی ہوئی جان سے ہمدردی کی ایک علامت ہے۔ انہوں نے ان نجی اور سرکاری اداروں کو سراہا جو آئی سی آر سی کے شانہ بشانہ اس اہم مقصد کو آگے بڑھانے میں اپنا کردار ادا کر رہے ہیں۔ آئی سی آر سی کے تحت ’’پہلے زندگی‘‘ کے عنوان سے جاری اس مہم میں عوامی شمولیت کے لئے ٹی وی، ریڈیو، سوشل میڈیا اور دیگر مواصلاتی ذرائع کو بروئے کار لاتے ہوئے عوامی حلف کی مہم چلائی جائے گی جس کے تحت عوام ایمبولینس کو راستہ دینے کے اپنے عزم کا اظہار کریں گے۔

عوامی حلف مہم کے تحت اپنا عزم ظاہر کرنے والے افراد ورچوئل پلیٹ فارم پر ’’فرینڈز فار لائف‘‘ کا حضہ بن جائیں گے جہاں وہ دیگر افراد کے ساتھ مل کر اپنا سماجی فریضہ انجام دے سکیں گے۔ علاوہ ازیں ایک ویب سائیٹ اور پلیج ایپ بھی متعارف کرائی گئی ہے جو بطور خاص عوام کی آگاہی اور بیداری کے لئے مختص ہیں۔ تقریب میں لوگو ں کے شعور کی بیداری اور آگہی میں اضافے کے لئے میڈیا کے کردار کا اعتراف بھی کیا گیا۔

آئی سی آر سی اور ساتھی تنظیموں نے میڈیا کو بطور اہم ستون کے مخاطب کیا اور کہا کہ وہ نقل و حمل کے دوران زندگی کے تحفظ کے لئے مختص ٹرانسپورٹ کے احترام کے حوالے سے عوام کو آگاہ کرنے کے لئے اس مہم کا باقاعدہ حصہ بنیں۔ آئی سی آر سی کے تحت چلنے والی ’’پہلے زندگی مہم‘‘ دراصل ایمبولینس کے لئے چلائی جانے والی مہم کا دوسرا مرحلہ ہے۔ اس سے پہلے 2016ء میں ’’رستہ دیں‘‘ کے عنوان سے بھی ایک مہم چلائی جا چکی ہے جس پر عوام اور میڈیا کی طرف سے پرجوش ردعمل ملا۔

سروے رپورٹ سے حاصل ہونے والے نتائج کے مطابق اس مہم کے بعد کار سواروں کے رویوں میں 16 فیصد تک بہتری دیکھی گئی۔ رواں برس میں چلنے والی مہم کار سواروں پر کس قدر اثر انداز ہوگی، اس کا اندازہ مہم سے پہلے اور مہم کے بعد مشاہداتی سروے سے کیا جائے گا۔ آئی سی آر سی اور اس کی ساتھی تنظیمیں سمجھتی ہیں کہ اس مہم کے دوررس نتائج حاصل کرنے کے لئے ہمیں اپنی مستقل کوششوں کو برقرار رکھنے کی ضرورت ہے۔
06/10/2017 - 18:05:31 :وقت اشاعت