بند کریں
صحت صحت کی خبریںتعلیم کے میدان میں ایک سال زندگی میں11 ماہ کا اضافہ کرتا ہے،
انسان اوسط سے زیادہ ہر ایک کلو ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 16/10/2017 - 16:26:27 وقت اشاعت: 16/10/2017 - 15:21:29 وقت اشاعت: 16/10/2017 - 14:46:07 وقت اشاعت: 16/10/2017 - 14:23:25 وقت اشاعت: 16/10/2017 - 14:09:51 وقت اشاعت: 16/10/2017 - 13:36:54 وقت اشاعت: 16/10/2017 - 13:02:17 وقت اشاعت: 16/10/2017 - 12:08:13 وقت اشاعت: 14/10/2017 - 19:27:49 وقت اشاعت: 14/10/2017 - 16:23:50 وقت اشاعت: 14/10/2017 - 14:08:58

تعلیم کے میدان میں ایک سال زندگی میں11 ماہ کا اضافہ کرتا ہے،

انسان اوسط سے زیادہ ہر ایک کلو گرام وزن کے بدلے اپنی زندگی کے دو ماہ کھو دیتا ہے، جدید تحقیق

لندن ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 اکتوبر2017ء) سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ تعلیم کے میدان میں ہر ایک سال گزارنے سے انسان کی زندگی میں اوسطاً 11 ماہ کا اضافہ ہوتا ہے۔محققین نے کہا ہے کہ انسان اوسط سے زیادہ ہر ایک کلو گرام وزن کے بدلے اپنی دو ماہ کی عمر کھو دیتا ہے اور روزانہ سگریٹ کا ایک پیکٹ پینے سے عمر کے سات سال گنوا دیتا ہے۔ایڈنبرا یونیورسٹی کی ٹیم کو اپنے سوالوں کا جواب لوگوں کے ڈی این اے میں فرق کے تجزیے سے ملا۔

ان کا خیال ہے کہ یہ تحقیق بالآخر لوگوں کے لیے زیادہ دن جینے کے نئے راستے کھولے گی۔اس کے لیے محققوں کے گروپ نے چھ لاکھ سے زیادہ افراد کے ڈی این اے کا مطالعہ کیا۔اگر کوئی سگریٹ نوشی اور شراب نوشی کرتا ہے، اس نے سکول چھوڑ دیا ہے اور اس کا وزن مقررہ مقدار سے زیادہ ہے تو ایسے شخص کی کسی ایک غیر صحت مند عادت کے اثرات کی شناخت مشکل ہو سکتی ہے۔

اس کے بر عکس محقق نے قدرتی تجربے پر توجہ مرکوز کی۔بعض لوگوں کے ڈی این میں تقلب یا میوٹیشن ہوتا ہے جس کے سبب ان میں بھوک لگنے یا پھر فاضل وزن حاصل کرنے کا امکان زیادہ ہوتا ہے۔ اس لیے محققوں نے لوگوں کی وسیع طرز زندگی سے قطع نظر زیادہ کھانے والے لوگوں کا موازنہ کم کھانے والے لوگوں سے کیا۔یونیورسٹی میں اشر انسٹیٹیوٹ کے ڈاکٹر پیٹر جوشی نے کہا کہ اس سے تجربہ خراب نہیں ہوتا۔

آپ علیحدہ طور پر براہ راست طویل عمر پر وزن کے اثرات کو دیکھ سکتے ہیں۔اسی طرح لوگ تعلیم میں جو وقت گزارتے ہیں اور شراب اور سگریٹ نوشی سے انھیں جو لطف آتا ہے اس کا تعلق بھی اسی قسم کے تقلب یا میوٹیشن کے گروپ سے ہے۔یہ تحقیق نیچر کمیونیکیشن نامی جرنل میں شائع ہوئی ہے جس میں یہ بتایا گیا ہے کہ محققوں نے انسانی ڈی این اے میں مخصوص تقلب یا میوٹیشن کی موجودگی کا پتہ چلایا ہے جو لمبی عمر پر اثرانداز ہوتا ہے۔

کسی جین میں موجود میوٹیشنز (ڈی این اے میں پوشیدہ احکامات کا مجموعہ) جو قوت مدافعت کے نظام کو چلانے میں شامل ہوتے ہیں وہ اوسطاً زندگی میں سات ماہ کا اضافہ کر سکتے ہیں۔جن لوگوں میں ایسے میوٹیشن ہوں جو خراب کولیسٹرول کی سطح میں اضافے کا باعث ہوں وہ زندگی کے آٹھ ماہ ختم کر دیتے ہیں۔اے پی اوای نامی ایک نادر جین جو خلل دماغ سے منسلک ہوتا ہے اس کے سبب زندگی 11 ماہ کم ہو جاتی ہے۔

ایک جین جس کی وجہ سے سگریٹ نوشی بہت اچھی لگتی ہے اس سے زندگی پانچ ماہ کم ہو جاتی ہے۔ڈاکٹر جوشی کا کہنا ہے کہ یہ جینیاتی اختلاف بڑی تصویر کا ایک چھوٹا سا حصہ ہے۔ ان کا کہنا ہے طویل عمری سے متعلق تقریباً 20 فیصد ویریئیشن یا تغیرات موروثی ہو سکتے ہیں اور ابھی تک ان میں سے صرف ایک فیصد میوٹیشن کا پتہ چل پایا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ جینیاتی طور پر طویل عمر پر اثر پڑتا ہے لیکن آپ جس طرز زندگی کا انتخاب کرتے ہیں اس کا زیادہ اثر ہوتا ہے۔ڈاکٹر جوشی کا کہنا ہے کہ ہم طویل عمرکو متاثر کرنے والے نئے اور نادر جینز کی دریافت کی امید کرتے ہیں تاکہ بڑھاپے کے بارے میں ہمیں نئی معلومات حاصل ہوں۔
16/10/2017 - 13:36:54 :وقت اشاعت