بند کریں
صحت صحت کی خبریںپنجاب میں انسداد پولیو کی تین روزہ قومی مہم کا کل سے آغاز،5 سال تک کے 17.63 ملین بچوں کو پولیو ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 15/10/2012 - 12:49:02 وقت اشاعت: 15/10/2012 - 12:43:12 وقت اشاعت: 15/10/2012 - 12:38:09 وقت اشاعت: 14/10/2012 - 21:51:30 وقت اشاعت: 14/10/2012 - 21:44:01 وقت اشاعت: 14/10/2012 - 20:46:37 وقت اشاعت: 14/10/2012 - 20:36:38 وقت اشاعت: 14/10/2012 - 20:35:59 وقت اشاعت: 14/10/2012 - 20:35:59 وقت اشاعت: 14/10/2012 - 20:34:34 وقت اشاعت: 14/10/2012 - 20:27:13

پنجاب میں انسداد پولیو کی تین روزہ قومی مہم کا کل سے آغاز،5 سال تک کے 17.63 ملین بچوں کو پولیو کے قطروں کے ساتھ وٹامن اے کی خوراک دی جائے گی ،2011 میں ملک بھر سے پولیو کے 198 کیس رپورٹ ،رواں سال43 تعداد تھی ،معاون خصوصی برائے صحت خواجہ سلمان رفیق کا پولیو مہم کے انتظامات کا جائزہ لینے کے لئے منعقدہ اجلاس سے خطاب

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ آئی این پی۔14اکتوبر ۔2012ء)معاون خصوصی برائے صحت خواجہ سلمان رفیق نے کہا ہے کہ پنجاب میں انسداد پولیو کی قومی مہم 15 تا 17 اکتوبر منائی جائے گی جس کے دوران 5 سال تک کی عمر کے 17.65 ملین بچوں کو پولیو کے قطروں کے علاوہ وٹا من اے کی خوراک بھی دی جائے گی - وہ اتوار کو پولیو مہم کے انتظامات کا جائزہ لینے کے لئے منعقدہ اجلاس سے خطاب کررہے تھے ۔

عالمی ادارہ صحت کے نمائندے ڈاکٹر نیما عابد ڈاکٹر وینڈے ،یونیسف کے نمائندے ڈاکٹر رانا مشتاق ، ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ پنجاب ڈاکٹر نثار چیمہ کے علاوہ دیگرطبی ماہرین موجود تھے- خواجہ سلمان رفیق نے میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بد قسمتی سے پاکستان دنیا کے صرف ان تین ممالک میں شامل ہے جہاں پولیو کی بیماری موجود ہے - انہوں نے کہا کہ اس بیماری کے مکمل خاتمے کے لئے چاروں صوبوں میں پولیو کے خلاف بھرپور مہم چلانے کی ضرورت ہے - انہوں نے کہا کہ صوبہ خیبر پختونخوا اور اس سے ملحقہ علاقوں میں جنگی صورتحال اور بعض دیگر وجوہات کی بنا ء پر ہر مرتبہ ہزاروں بچے پولیو کے قطرے پینے سے محروم رہ جاتے ہیں جس کی وجہ سے پولیو کا وائرس پنجاب سمیت پورے ملک میں موجود ہے - انہوں نے بتایا کہ اگر چہ پنجاب میں پولیو کی کوریج میں بہت بہتری آئی ہے جس کی وجہ سے رواں سال صرف تین پولیو کے کیس سامنے آئے ہیں جبکہ گذشتہ سال ان کی تعداد9 تھی- انہوں نے بتایا کہ2011ء میں پورے ملک میں پولیو کے 198کیس رپورٹ ہوئے تھے جبکہ رواں سال یہ تعدادکم ہو کر 43 رہ گئی ہے - خواجہ سلمان رفیق نے کہا کہ حکومت پنجاب پولیو کے خاتمے کے لئے سخت اقدامات کر رہی ہے اور وزیر اعلی پنجاب کی ہدایت پر تمام اضلاع کے ڈی سی او صاحبان کو پولیو مہم کی سخت نگرانی کی ہدایت کی گئی ہے اور غفلت کا مظاہرہ کرنے والے اہلکاروں کے خلاف تادیبی کارروائی کی جا رہی ہے -ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ ڈاکٹر نثار چیمہ کے مطابق 15تا 17 اکتوبر کے دوران 17.65 ملین بچوں کو پولیو کے قطرے پلانے کے لئے 38398موبائل ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں - انہوں نے کہا کہ پولیو کے قطروں کے ساتھ چھ ماہ سے پانچ سال تک کے بچوں کو وٹا من اے کے قطرے بھی پلائے جائیں گے - انہوں نے بتایا کہ پنجاب میں تقریبا 40 لاکھ سے زائد بچے وٹا من اے کی کمی کا شکار ہیں جس سے بچوں کی قوت مدافعت اور بینائی متاثر ہو سکتی ہے-حکومت پنجاب نے 14 ملین سے زائد بچوں کو وٹامن اے کے قطرے پلانے کا انتظام کیا ہے جس کے لئے یونیسف ، عالمی ادارہ صحت اور مائیکرونیوٹرینٹ انیشیٹوکا تعاون حاصل ہے - انہوں نے والدین سے اپیل کی کہ وہ اپنے بچوں کو پولیو ویکسین کے قطرے ضرور پلوائیں تا کہ نئی نسل کو مستقل معذوری سے بچایا جا سکے-
14/10/2012 - 20:46:37 :وقت اشاعت