بند کریں
صحت صحت کی خبریںبرطانیہ ،خواتین مریضوں سے زیادتی، ڈاکٹر کو 11 سال قید، چالیس سالہ عدالتی تاریخ میں پروفیشنل ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 19/12/2012 - 19:20:26 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 19:20:06 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 19:19:44 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 19:19:44 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 19:17:41 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 19:15:54 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 18:40:43 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 18:26:13 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 16:26:39 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 16:26:22 وقت اشاعت: 19/12/2012 - 16:25:39

برطانیہ ،خواتین مریضوں سے زیادتی، ڈاکٹر کو 11 سال قید، چالیس سالہ عدالتی تاریخ میں پروفیشنل شخص کی طرف سے اس طرح کا مقدمہ نہیں دیکھا ، اپنے مریضوں کی طرف سے خود پر کئے گئے اعتماد، اعتبار اور بھروسہ کو زک پہنچائی،ممکن حد تک اعتماد کو ٹھیس پہنچاتے ہوئے وقت سے فائدہ اٹھایا،جج سائمن لاور کے ریمارکس

بریڈ فورڈ(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔آئی این پی۔19دسمبر۔ 2012ء) ساؤتھ یارکشائر کے ایک ایشیائی ڈاکٹر کو خواتین مریضوں سے جنسی زیادتی اور ان پر جنسی تشدد کے جرم میں11برس کیلئے جیل بھیج دیا گیا۔ شفیلڈ کراؤن کورٹ میں پیش کئے گئے مقدمے میں ڈاکٹر غوث الاسلام پر الزام لگایا گیا تھا کہ اس نے جنرل پریکٹشنر کی حیثیت سے 25 برس تک سات خواتین کو اپنی زیادتیوں کا نشانہ بنائے رکھا۔

جج سائمن لاور نے سزا سناتے ہوئے مجرم کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے اپنی چالیس سالہ عدالتی تاریخ میں ایک پروفیشنل شخص کی طرف سے اس طرح کا مقدمہ نہیں دیکھا جس طرح تم نے اپنے مریضوں کی طرف سے خود پر کئے گئے اعتماد، اعتبار اور بھروسہ کو زک پہنچائی اور ممکن حد تک اعتماد کو ٹھیس پہنچاتے ہوئے وقت سے فائدہ اٹھایا۔ 70 سالہ ڈاکٹر غوث الاسلام کو سزا سنائی گئی تو جیوری کی خواتین اراکین خواتین سے ہونے والی زیادتی کو یاد کرتے ہوئے رو پڑیں جبکہ مجرم نے اپنا سر شرم سے جھکا لیا۔

جج نے سزا سناتے ہوئے ان خواتین کو خراج پیش کیا جنہوں نے ڈاکٹر کی زیادتیوں کو بے نقاب کیا۔ عدالت کو بتایا گیا تھا کہ زیادتی کا نشانہ بننے والی سات خواتین میں سے تین شدید ذہنی اور نفسیاتی عوارض کا شکار ہیں اور انہیں اس حال میں اس شخص نے پہنچایا ہے جس نے انہیں طبی سہولت فراہم کرنے اور ان کا دھیان رکھنے کا حلف اٹھا رکھا تھا۔
19/12/2012 - 19:15:54 :وقت اشاعت