بند کریں
صحت صحت کی خبریںرورل ہیلتھ سینٹر تتہ پانی کے پیرامیڈیکس کی مطالبات کے حق میں ٹوکن ہڑتال جاری، دور دراز دیہاتوں ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 21/07/2013 - 16:21:17 وقت اشاعت: 20/07/2013 - 20:34:43 وقت اشاعت: 20/07/2013 - 11:34:31 وقت اشاعت: 19/07/2013 - 14:49:54 وقت اشاعت: 19/07/2013 - 14:49:22 وقت اشاعت: 19/07/2013 - 14:21:27 وقت اشاعت: 19/07/2013 - 14:11:06 وقت اشاعت: 18/07/2013 - 23:31:10 وقت اشاعت: 18/07/2013 - 12:44:41 وقت اشاعت: 17/07/2013 - 22:03:40 وقت اشاعت: 17/07/2013 - 20:53:46

رورل ہیلتھ سینٹر تتہ پانی کے پیرامیڈیکس کی مطالبات کے حق میں ٹوکن ہڑتال جاری، دور دراز دیہاتوں سے آنے والے مریضوں کو سخت مشکلات کا سامنا

تتہ پانی(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔آئی این پی۔ 19جولائی 2013ء)رورل ہیلتھ سینٹر تتہ پانی کے پیرامیڈیکس کی مطالبات کے حق میں ٹوکن ہڑتال جاری ،دور دراز دیہاتوں سے آنے والے مریضوں کو سخت مشکلات کا سامنا،کوئی پرسان حال نہیں،تفصیلات کے مطابق ہیلتھ ایمپلائز ایسو سی ایشن کی کال پر تتہ پانی رورل ہیلتھ سینٹر میں پیرامیڈیکس کی ہڑتال بدستور جاری ہے ،ہر روز دوگھنٹے ٹوکن ہڑتال کے باعث دور دراز سے آنے والے مریضوں کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتاہے،مریضوں کو سہولیات کی عدم دستیابی کے باعث پرائیویٹ کلینکس کی طرف رخ کرنا پڑتا ہے،مہنگائی کے اس دور میں غریب عوام کے لیے پرائیویٹ ہسپتالوں سے علاج معالجہ خاصا دشوار ہو چکا ہے،گزشتہ روز ہیلتھ سینٹر کے دورہ کے دوران میڈیا نمائندگان سے گفتگو کر تے ہوئے مریضوں کیساتھ آئے ہوئے ورثاء نے کہا کہ پیرامیڈیکس کی ہڑتال کے باعث مریضوں کو کوئی سہولت نہیں مل رہی،اس لیے ہمیں پرائیویٹ ہسپتالوں میں جانا پڑ رہا ہے جو آج مہنگائی کے دور میں سخت مشکل ہو چکاہے،سرکاری ہسپتا ل غریب عوام کے علاج بھی ناگزیر ہو چکا ہے ،وزیر صحت قمر الزمان فوری نوٹس لیں،جبکہ دوسری جانب رورل ہیلتھ سینٹر تتہ پانی کے پیرامیڈیکس زبیر عثمانی،الیاس ملک،ملک منشاء،افضال حسین شاہ،الطاف حسین،محمد بشیر اورعامر معروف نے میڈیا کو تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ ہم اپنے حقوق ملنے تک احتجاج جاری رکھیں گے،2009 ء میں رورل ایریا الاؤنس ،ہیلتھ الاؤنس اور رسک الاؤنس کی منظوری ہوئی تھی لیکن عملدرآمد نہ ہو سکا،پیرامیڈیکس کی زندگی اجیرن بن چکی ہے، وزیر صحت قمرالزمان نے کچھ عرصہ قبل مطالبات منظور کرنے کی یقین دہانی کروائی تھی لیکن عملدر آمد نہ ہو سکا،یکم اگست تک روزانہ دو گھنٹے کی ٹوکن ہڑتا جاری رکھیں گے،اگر ہمارے حقوق نہ دیے گئے تو ہم سخت احتجاج کریں گے جس کی ذمہ داری حکومت پر ہو گی۔


19/07/2013 - 14:21:27 :وقت اشاعت