بند کریں
صحت صحت کی خبریںنعیم بخاری نے جسٹس افتخار پر میرے کیس کے حوالے سے غلط الزام لگا یا ہے،ڈاکٹر شیرافگن،جسٹس ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 13/03/2007 - 15:53:39 وقت اشاعت: 13/03/2007 - 15:53:39 وقت اشاعت: 13/03/2007 - 13:59:29 وقت اشاعت: 13/03/2007 - 13:01:43 وقت اشاعت: 12/03/2007 - 12:31:00 وقت اشاعت: 11/03/2007 - 22:22:15 وقت اشاعت: 10/03/2007 - 17:11:09 وقت اشاعت: 10/03/2007 - 12:58:55 وقت اشاعت: 09/03/2007 - 22:16:54 وقت اشاعت: 09/03/2007 - 12:49:51 وقت اشاعت: 09/03/2007 - 11:29:59

نعیم بخاری نے جسٹس افتخار پر میرے کیس کے حوالے سے غلط الزام لگا یا ہے،ڈاکٹر شیرافگن،جسٹس افتخار نے چار سال سے میرے ساتھ کبھی رعایت نہیں کی،کیس میرٹ پر چلا،وزیر پارلیمانی امور کی گفتگو

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔11مارچ۔2007ء)وفاقی وزیرپارلیمانی امور ڈاکٹر شیرافگن خان نیازی نے کہا ہے کہ غیر فعال چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کے خلاف حکومت کی طرف سے کسی ریفرنس کی تیاری ان کے علم میں نہیں تھی ۔نعیم بخاری نے اپنے خط میں میرے کیس کے حوالے سے جسٹس افتخار پرغلط الزام لگایا ہے ۔ اتوار کی شب ایک نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر شیرافگن نیازی نے کہاکہ جسٹس افتخار کا معاملہ خالص قانونی اور عدالتی معاملہ ہے اور آئین کی دفعہ204کے تحت اس سے متعلق تبصرہ توہین عدالت ہے جبکہ دفعہ 68کے تحت بھی اس معاملے پر تنقید نہیں کی جاسکتی۔

انہوں نے کہاکہ یہ بات ان کے علم میں نہیں تھی کہ حکومت چیف جسٹس کے خلاف کوئی ریفرنس تیار کررہی ہے کیونکہ وہ میانوالی میں موجود تھے ۔البتہ تین ہفتے پہلے نعیم بخاری ایڈووکیٹ کا ایک خط سامنے آیا تھا انہوں نے کہاکہ نعیم بخاری نے اس خط میں میرے بیٹے کے کیس کا بھی حوالہ دیا ہے میرا کیس میرٹ پر چل رہا تھا اورمیں نے اپنے کیس کے معاملے میں ان سے کبھی بات نہیں کی ۔ چار سال سے جسٹس افتخار نے کبھی رعایت نہیں کی چار سال بعد اب میرے مرحوم بیٹے کے حوالے سے کیس میں ریلیف ملا ہے جو ابھی پوری طرح نہیں ملا ۔انہوں نے کہاکہ قائمقام چیف جسٹس جاوید اقبال نے حالیہ صورتحال کے حوالے سے صحیح رائے دی ہے اوراب معاملہ عدلیہ کے پاس ہے ۔
11/03/2007 - 22:22:15 :وقت اشاعت