معاشرے میں مثبت تبدیلیوں کیلئے صحت مند سرگرمیوں کا انعقاد بنیادی کردار کا حامل ہے، آئی جی سندھ

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔17ستمبر۔2014ء) معاشرے میں مثبت تبدیلیوں کیلئے صحت مند سرگرمیوں کا انعقاد بنیادی کردار کا حامل ہے اور مختلف کھیل بشمول فٹبال‘ کرکٹ‘ ہاکی‘ بیس بال‘ ٹینس وغیرہ کا معاشروں کی سطح پر فروغ سے ناصرف انسان جسمانی وذہنی طور پر صحت مند رہتا ہے بلکہ نوجوان طبقہ بھی ان میں ترقی وخوشحالی کیلئے کوشاں رہتا ہے جوکہ بلاسبہ کسی بھی پرامن معاشرے کے قیام کی اولین ضرورت ہے۔

ان خیالات کا اظہار آئی جی سندھ غلام حیدر جمالی نے نیشنل اسپورٹس کمپلیکس کراچی میں منعقد ہسندھ پولیس اسپورٹس کی اختتامی تقریب سے خطاب کے دوران کیا۔ اس موقع پر کمشنر کراچی شعیب احمد صدیقی‘ ایڈیشنل آئی جی کراچی غلام قادر تھیبو‘ ایڈیشنل آئی جی اسپیشل برانچ سندھ سید ذاکر حسین ودیگر سینئر پولیس افسران بھی موجود تھے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ کھیلوں کی سرگرمیوں میں پولیس فور سے وابستہ افسران اور جوان بھی حصہ لیں تاکہ فٹنس برقرار رہے اور فرائض کی ادائیگی میں مستعدی وتیزی نمایاں طور پر دکھائی دے۔

انہوں نے کہا کہ جرائم کے سدباب اور امن وامان کے حالات پر موثر کنٹرول کے ضمن میں گزشتہ ڈھائی ماہ کے دوران صوبہ سندھ کے تمام پولیس رینج کے تھانہ جات کی حدود میں چھاپہ مار کارروائیوں اور پولیس مقابلوں میں 212 ملزمان ہلاک ہوئے جن میں 36 دہشت گرد‘ 7 اغواء کار‘ ایک بھتہ خور‘ 166 ڈکیت اور 3 نوٹیفائیڈ ڈکیت شامل ہیں۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ ڈھائی ماہ کے عرصہ میں کراچی پولیس نے 6269 چھاپوں اور 365 پولیس مقابلوں میں 36 دہشت گردوں‘ 4 اغواء کاروں‘ ایک بھتہ خور اور 118 ڈاکوؤں سمیت مجموعی طور پر 159 جرائم پیشہ عناصر ہلاک ہوئے۔

کمشنر کراچی شعیب احمد صدیقی نے اس موقع پر کہا کہ صوبائی اور شہروں کی سطح پر کھیلوں کے فروغ سے بالخصوص نوجوانوں میں مثبت تبدیلیاں آتی ہیں اور مستقبل میں ایسے ہی نوجوانوں کی بدولت بین الاقوامی سطح پر پاکستان کا نام روشن ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئی جی سندھ غلام حیدر جمالی کی قیادت میں بحالی امن میں پولیس کا کردار قابل تعریف ہے اور جس محنت وجانفشانی سے پولیس اپنے فرائض انجام دے رہی ہے اس کے مثبت نتائج سامنے آرہے ہیں اور بالخصوص ٹارگٹڈ کلنگز‘ اغوا برائے تاوان اور بھتہ پرچیوں/ کلیکشن کے واقعات میں نمایاں کمی آئی ہے۔ اس موقع پر سندھ پولیس اسپورٹس کی اختتامی تقریب میں شرکت کرنے والی ٹیموں میں میڈلز اور انعامات تقسیم کئے گئے۔

Your Thoughts and Comments