بند کریں
صحت صحت کی خبریںاسپین: چار مبینہ ایبولا مثاثرین میں سے دو میں یہ وائرس نہیں پایا گیا

صحت خبریں

وقت اشاعت: 17/10/2014 - 22:05:42 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 21:54:34 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 21:14:36 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 21:08:22 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 18:28:58 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 17:48:27 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 17:37:26 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 17:25:33 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 15:51:12 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 14:22:44 وقت اشاعت: 17/10/2014 - 12:52:29

اسپین: چار مبینہ ایبولا مثاثرین میں سے دو میں یہ وائرس نہیں پایا گیا

میڈرڈ (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔17 اکتوبر۔2014ء)یورپی ملک اسپین میں مہلک ایبولا وائرس کے چار میں سے دو مبینہ متاثرین میں اس وائرس کے آثار نہیں پائے گئے ہیں۔ میڈرڈ حکام کے مطابق ہسپتال میں داخل ان چاروں مثاثرین کا تفصیلی طبی معائنہ کیا گیا ہے جس کے نتیجے میں ان میں سے دو میں اس وائرس کی موجودگی ثابت نہیں ہوئی ہے۔ اسپین کی ایبولا کی نگران کمیٹی نے اپنے سرکاری ٹوئٹر اکاوٴنٹ پر ایک پیغام پوسٹ کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ ان میں سے ایک کو ایئر فرانس طیارے کے ذریعے میڈرڈ ایئر پورٹ پر ایک الگ تھلگ مقام پر رکھا گیا تھا جبکہ دوسرا شخص وہ ہے جو اْسی ایمبولینس میں سوار تھا جس میں ہسپانوی نرس ٹیریسا رومیرو کو 6 اکتوبر کو ایبولا وائرس کا شکار ہونے کے سبب ہسپتال پہنچایا تھا۔

ان دونوں افراد کو بْخار ہو گیا تھا جس کے سبب شبہ ظاہر کیا جا رہا تھا کہ انہیں بھی ایبولا نے اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے۔ ان کے اب تک کیے جانے والے طبی معائنوں سے ان میں ایبولا وائرس کی موجودگی ظاہر نہیں ہوئی ہے اب ان کا مزید ٹیسٹ 72 گھنٹے بعد کیا جائے گا۔

17/10/2014 - 17:48:27 :وقت اشاعت