بند کریں
صحت صحت کی خبریںپاکستان میں پولیو پروگرام تباہی سے دوچار ہے: رپورٹ

صحت خبریں

وقت اشاعت: 26/10/2014 - 15:46:35 وقت اشاعت: 26/10/2014 - 15:38:45 وقت اشاعت: 26/10/2014 - 12:51:16 وقت اشاعت: 25/10/2014 - 23:58:32 وقت اشاعت: 25/10/2014 - 23:26:37 وقت اشاعت: 25/10/2014 - 22:59:17 وقت اشاعت: 25/10/2014 - 21:56:17 وقت اشاعت: 25/10/2014 - 21:43:02 وقت اشاعت: 25/10/2014 - 21:25:38 وقت اشاعت: 25/10/2014 - 21:18:23 وقت اشاعت: 25/10/2014 - 21:15:28

پاکستان میں پولیو پروگرام تباہی سے دوچار ہے: رپورٹ

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔25اکتوبر۔2014ء) دنیا بھر میں پولیو کی مانیٹرنگ کرنے والے ادارے کا کہنا ہے عالمی انسداد پولیو مہم میں پاکستان سب سے بڑی رکاوٹ بن چکا ہے۔ پاکستانی پولیو وائرس سے افغانستان سمیت مشرق وسطیٰ کے کئی ممالک متاثر ہو چکے ہیں۔پولیو کے خلاف کام کرنے والے عالمی ادارے "انڈیپنڈنٹ مانیٹرنگ بورڈ آف دی گلوبل پولیو اریڈکشن اینی شیٹیو"کی رپورٹ کے مطابق پاکستان کا پولیو پروگرام تباہی سے دوچار ہے۔

ادارے کی رپورٹ کے مطابق پولیو پروگرام کے باوجود وائرس پاکستان میں تیزی سے پھیل رہا ہے۔ 2014 میں سامنے آنے والے دنیا کے 80 فیصد پولیو کیسز کا تعلق پاکستان سے ہے۔ پاکستان میں پولیو سے متاثر ہونے والوں میں زیادہ تر بچے شامل ہیں ۔ ادارے کا کہنا ہے پولیو کیسز کے باعث پاکستان ہمسایہ ممالک کیلئے بھی حقیقی خطرہ بن چکا ہے نہ صرف افغانستان بلکہ شام اور عراق میں بھی پولیو وائرس پہنچ چکا ہے جہاں 38 بچے متاثر ہو چکے ہیں جبکہ مشرق وسطیٰ کے دیگر ممالک میں یہ وائرس پھیلنے کا خدشہ ہے۔

انڈیپنڈنٹ مانیٹرنگ بورڈ نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ شام اور عراق سے بےگھر ہونے والے لاکھوں افراد کے باعث وائرس مزید علاقوں میں پہنچ سکتا ہے۔ رپورٹ کے مطابق یونیسف اور روٹری انٹرنیشنل پاکستان میں پولیو کے خاتمے میں اہم کردار ادا کر سکتے ہیں۔ گزشتہ دو برسوں میں شمالی وزیرستان میں سب سے زیادہ پولیو پھیلا۔ شمالی وزیرستان میں پاک فوج کے آپریشن کے بعد پولیو کے خاتمے کیلئے بھرپورمہم شروع کئے جانے کا موقع ہے۔

25/10/2014 - 22:59:17 :وقت اشاعت