بند کریں
صحت صحت کی خبریںپولیس نے سروسز ہسپتال کے ملازم کا جسمانی ریمانڈ لے کر تفتیش شروع کردی،
مریضوں کی ادویات کی ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 27/11/2014 - 21:06:42 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 20:40:32 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 20:37:18 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 20:37:18 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 20:34:42 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 20:23:47 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 20:22:10 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 19:56:02 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 19:54:33 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 18:53:17 وقت اشاعت: 27/11/2014 - 18:51:38

پولیس نے سروسز ہسپتال کے ملازم کا جسمانی ریمانڈ لے کر تفتیش شروع کردی،

مریضوں کی ادویات کی حفاظت انتظامیہ سمیت تمام ملازمین کے فرائض میں شامل ہے‘پرنسپل سمز

لاہور( اُردو پوائنٹ تاز ترین اخبار۔ 27نومبر 2014ء ) پولیس تھانہ شادمان نے ادویات چوری میں ملوث سروسز ہسپتال کے ملازم نواز کا جسمانی ریمانڈ لے لیا۔ ابتدائی تفتیش میں ملزم نے سنسنی خیز انکشاف کیے جس پر ہسپتال میں تھرتھلی مچ گئی اور گذشتہ روز نرسوں نے سمیت دیگر عملے نے الماریوں سے ادویات نکال کر باہر وارڈوں میں رکھ دی جبکہ گرفتار ملازم کے ساتھی اسے چھڑانے کے لیے متحرک ہوگئے اور مقدمہ کی واپسی کے لیے ہسپتال انتظامیہ کو سفارشیں کرانا شروع کردیں۔

پرنسپل سروسز میڈیکل انسٹی ٹیوٹ ڈاکٹر حامد بٹ کا کہنا تھا کہ وزیراعلی پنجاب محمد شہباز شریف کی جانب سے داخل مریضوں کے لیے فراہم کی جانے والی ادویات کی حفاظت مجھ اور ایم ایس سمیت تمام ملازمین کی ذمہ داری ہے لہذا ڈاکٹروں، نرسوں اور پیرا میڈیکس کو اس سلسلے میں چوکس رہنا ہوگا تاکہ کوئی بھی اہلکار ادویات چوری کرنے کی جرأت نہ کرسکے۔ ایم ایس ڈاکٹر عمر فاروق بلوچ نے ملازمین سے اپیل کی کہ مریضوں کی ادویات چوری کرنے والے عناصر کی نشاندہی کریں تاکہ ایسے عناصر کو قانون کے حوالے کیا جاسکے اور نشاندہی کرنے والے ملازم کا نام صیغہ راز میں رکھا جائے گا اور اسے تعریفی سرٹیفکیٹ اور نقد انعام سے نوازا جائے گا۔

27/11/2014 - 20:23:47 :وقت اشاعت