بند کریں
صحت صحت کی خبریںگلوبل الائنس کے اعلیٰ سطحی وفد کی مشیر صحت خواجہ سلمان رفیق سے ملاقات،سیکرٹری صحت نے وفد ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 18/02/2015 - 16:35:15 وقت اشاعت: 18/02/2015 - 16:23:06 وقت اشاعت: 18/02/2015 - 15:21:21 وقت اشاعت: 18/02/2015 - 15:19:00 وقت اشاعت: 18/02/2015 - 14:47:56 وقت اشاعت: 18/02/2015 - 13:54:10 وقت اشاعت: 18/02/2015 - 13:28:47 وقت اشاعت: 18/02/2015 - 12:35:35 وقت اشاعت: 17/02/2015 - 23:24:00 وقت اشاعت: 17/02/2015 - 22:51:10 وقت اشاعت: 17/02/2015 - 22:45:40

گلوبل الائنس کے اعلیٰ سطحی وفد کی مشیر صحت خواجہ سلمان رفیق سے ملاقات،سیکرٹری صحت نے وفد کو بریفنگ دی

لاہور ( اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 18فروی 2015ء) مشیر صحت پنجاب خواجہ سلمان رفیق نے کہا ہے کہ پنجاب میں ویکسین کے ذریعے ( وی پی ڈی ) کنٹرول ہونے والے امراض کی روک تھام کیلئے روٹین ایمونائزیشن پر خصوصی توجہ دی جا رہی ہے اور ای پی آئی سمیت صحت کے تمام شعبوں کی ترقی کیلئے چیف سنٹر ہیلتھ روڈمیپ کے تحت ٹھوس اور عملی اقدامات پر عملدرآمد شروع کر دیاگیا ہے۔

انہوں نے یہ بات گلوبل الائنس فار ویکسین اینڈ ایمونائزیشن (گاوی ) کے جنیوا سے آئے ہوئے 25رکنی اعلیٰ سطحی وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ وفد نے چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈاکٹر برکلے کی سربراہی میں سول سیکرٹریٹ میں مشیر صحت اوراعلیٰ حکومتی عہدیداروں سے ملاقات کی۔اس موقع پر ایڈیشنل چیف سیکرٹری سید مبشر حسن، سیکرٹری ہیلتھ جواد رفیق ملک، پارلیمانی سیکرٹری صحت خواجہ عمران نذیر، سپیشل سیکرٹری خزانہ احمد رضا سرور، ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ ڈاکٹر زاہد پرویز اور انٹرنیشنل ڈویلپمنٹ پارٹنرز کے نمائندے بھی موجود تھے۔

سیکرٹری صحت جواد رفیق ملک نے گاوی کے وفد کو پنجاب میں بچوں اور حاملہ خواتین کو بیماریوں سے بچاؤ کیلئے حفاظتی ٹیکوں کے پروگرام ای پی آئی کے تحت روٹین ایمونائزیشن کی کوریج کو مزید بہتر بنانے، ویکسینیٹرز کی نئی آسامیاں پیدا کرنے، ویکسینیٹرز کی اینڈرائیوڈ فون کے ذریعے مانیٹرنگ کے نظام، ویکسین ٹریننگ سسٹم، لیڈی ہیلتھ ورکرز کی ٹریننگ، روٹین ایمونائزیشن اور پولیو مہم کے مائیکرو پلاننگ کو فول پروف بنانے کے اقدامات، تھرڈپارٹی کے ذریعے جانچ پڑتال اور دیگر امور کے بارے بریفنگ دی۔

سیکرٹری صحت نے بتایا کہ حکومت حفاظتی ٹیکوں کی ویکسین کی خریداری کیلئے سالانہ 1192ملین روپے خرچ کر رہی ہے۔ شہروں کے مضافاتی علاقوں کیلئے 4ہزار لیڈی ہیلتھ کمیونٹی ورکرز بھرتی کرنے کی منصوبہ بندی کی گئی ہے۔جواد رفیق ملک نے بتایا کہ صوبے کے دیہی علاقوں میں بیماریوں کی روک تھام اور ماں بچہ کی صحت کے پروگرام کو کامیاب بنانے میں لیڈی ہیلتھ ورکرز کا بہت اہم کردار ہے اور اب شہروں کے مضافاتی علاقوں کو کور کرنے کیلئے لیڈی ہیلتھ کمیونٹی ورکرز بھرتی کی جائیں گی۔

انہوں نے بتایا کہ ویکسین لاجسٹک مینجمنٹ انفارمیشن سسٹم (VLMIS) کو صوبے کے مزید 23ڈسٹرکٹ تک توسیع دی جا رہی ہے۔خواجہ سلمان رفیق نے گاؤی کے چیف ایگزیکٹو سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ای پی آئی پروگرام کے تحت ویکسین ذخیرہ کرنے کیلئے یونیسف کے تعاون سے لاہور اور ملتان میں ویئر ہاؤسز تعمیر کئے جا رہے ہیں جبکہ چین کی حکومت نے 36اضلاع کیلئے 36ریفریجریٹر کیئریرز فراہم کئے ہیں۔

خواجہ سلمان رفیق نے مزید بتایا کہ پنجاب میں پرائمری اور سیکنڈری ہیلتھ کیئر سسٹم کو اپ گریڈ کرنے کیلئے چیف منسٹر ہیلتھ روڈمیپ کے تحت خصوصی اقدامات پر عملدرآمد شروع ہوچکا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ بنیادی مراکز صحت اور دیہی مراکز صحت میں ڈاکٹرز کی خالی آسامیوں کو پُر کرنے کے علاوہ ادویات کی 100فیصد فراہمی یقینی بنانے اور مانیٹرنگ کے اقدامات کئے گئے ہیں جبکہ تحصیل و ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز ہسپتالوں میں سپیشلسٹ ڈاکٹرز تعینات کئے جا رہے ہیں جنہیں خصوصی مراعات دینے کی منظوری وزیراعلیٰ پنجاب نے دے دی ہے۔

اس موقع پر گاوی (GAVI) کے چیف ایگزیکٹو ڈاکٹر برکلے نے کہا کہ بچوں کے حفاظتی ٹیکوں کے پروگرام (EPI)اور ویکسین کے ذریعے کنٹرول (VPD) ہونے والی بیماریوں کی روک تھام کے سلسلہ میں گاوی اپنا تعاون جاری رکھے گا اور اس تعاون کو مزید فروغ دیا جائے گا۔

18/02/2015 - 13:54:10 :وقت اشاعت