بند کریں
صحت صحت کی خبریںپولیو سے بچاؤ کے قطرے پلانے سے انکار کرنے والے مدارس اور اسکولز کی انتظامیہ کیخلاف قانونی ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 31/03/2015 - 17:41:10 وقت اشاعت: 31/03/2015 - 16:18:59 وقت اشاعت: 31/03/2015 - 16:11:58 وقت اشاعت: 31/03/2015 - 15:20:35 وقت اشاعت: 31/03/2015 - 14:28:41 وقت اشاعت: 31/03/2015 - 13:29:29 وقت اشاعت: 31/03/2015 - 13:14:12 وقت اشاعت: 30/03/2015 - 23:26:31 وقت اشاعت: 30/03/2015 - 23:22:35 وقت اشاعت: 30/03/2015 - 23:14:05 وقت اشاعت: 30/03/2015 - 21:46:27

پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلانے سے انکار کرنے والے مدارس اور اسکولز کی انتظامیہ کیخلاف قانونی کارروائی ہوگی ‘ بلوچستان ایمر جنسی سیل

کوئٹہ(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔31مارچ۔2015ء)بلوچستان میں ایمرجنسی سیل کے رابطہ کار افسر ڈاکٹر سیف الرحمان نے کہا ہے کہ حکومت انسداد پولیو مہم کے دوران بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلانے سے انکار کرنے والے مدارس اور اسکولز کی انتظامیہ کے خلاف قانونی کارروائی کرے گی۔عالمی ادارہ صحت یونیسف اور دیگر بین الاقوامی اداروں کے حکام کی موجودگی میں ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے ڈاکٹر سیف الرحمان نے کہاکہ ان تمام اقدامات کا مقصد ملک کو پولیو سے پاک کرنا ہے۔

انہوں نے کہاکہ حکومت کی جانب سے سنگین قسم کی بیماریوں سے نمٹنے کے لئے ملک میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی اور مہم کے دوران کسی بھی انتظامیہ غفلت کو براداشت نہیں کیا جائے گا۔اجلاس کے دوران ڈاکٹر سیف الرحمان نے اعلان کیا کہ جو مدارس اور سکول انسداد پولیو مہم کے دوران بچوں کو پولیو سے بچاوٴ کے قطرے پلانے سے انکار کریں گے ان کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ ویکسی نیشن پلانے کے عمل میں مداخلت کرنا یا اسے روکنے کی کوشش کرنا جرم ہے اور اس میں ملوث لوگوں کے خلاف قانونی کارروائی کا فیصلہ کیا گیا ۔سیف الرحمان نے کہاکہ حکومت یونین کونسلز کے ان میڈیکل افسران پر بھی مقدمات قائم کریگی جو بچوں کے گھر میں غیر موجودگی کے حوالے سے جعلی دستاویزات جمع کروائیں گے۔

31/03/2015 - 13:29:29 :وقت اشاعت