بند کریں
صحت صحت کی خبریںاینٹی ڈینگی ریسپانس کمیٹی لاہور و والٹن کنٹونمنٹ بورڈز کا اجلاس،ڈینگی لاروا کے خاتمے کا ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 08/04/2015 - 17:36:50 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 17:33:29 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 17:26:27 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 17:11:12 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 17:09:58 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 16:16:57 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 14:55:01 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 14:33:29 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 14:17:50 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 14:13:15 وقت اشاعت: 08/04/2015 - 13:35:39

اینٹی ڈینگی ریسپانس کمیٹی لاہور و والٹن کنٹونمنٹ بورڈز کا اجلاس،ڈینگی لاروا کے خاتمے کا عزم

لاہور ( اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔08 اپریل۔2015ء) ڈینگی لاروا کے خاتمے کے لئے حکومتی مشینری عوامی نمائندوں کی نگرانی میں تمام یونین کونسلز اور وارڈز میں پوری طرح متحرک ہے،اینٹی ڈینگی ٹیمیں لاہور اور ٹی ایم اے اقبال ٹاؤن کے تمام علاقوں میں بلا ناغہ سرویلنس اور ٹارگٹ فوگنگ کی کا عمل کرنے کی تیاریاں مکمل کریں۔ یہ بات سیکرٹری کوآپریٹو بابر حیات تارڑ نے ٹاؤن ایمرجنسی ریسپانس کمیٹی اقبال ٹاؤن کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔

محکمہ صحت، تعلیم ، فشریز ، کوآپریٹو اور دیگر متعلقہ اداروں کے افسران نے اجلاس میں شرکت کی۔انہوں نے کہا کہ جس طرح گزشتہ سال تمام محکموں نے دن رات ایک کرکے مربوط کوششوں سے ڈینگی کو شکست دی تھی اسی طرح رواں سال میں بھی آغاز ہی سے ڈینگی لاروا کی نشاندہی اور کنٹرول کرنے کے لئے مربوط لائحہ عمل اور مشترکہ کوششوں سے لاروے کو تلف کرنے کے لئے ہنگامی اقدامات کئے جانے چاہئیں۔

انہوں نے کہا کہ ڈینگی لاروا کی افزائش کے حوالے سے موجودہ موسم اور ماحول انتہائی سازگار ہے تاہم تمام سطح پر بھرپور کوششوں کے ذریعے ابتداء سے ہی لاروے کی افزائش کا عمل روکنا نسبتا آسان ہے۔انہوں نے متعلقہ محکموں کے نمائندوں کو ہدایت کی کہ شہریوں کو ڈینگی کے خطرے سے نمٹنے کے لئے شعور اجاگر کرنے اور حفاظتی تدابیر احتیار کرنے کے لئے آگاہی مہم اشد اہمیت کی حامل ہے۔

اجلاس میں رواں ہفتے کے دوران انسداد ڈینگی مہم کے لئے لاروا سرویلنس ، سپرے ، صفائی ستھرائی اور آگاہی مہم کے حوالے سے مختلف محکموں کی طرف سے کئے جانے والے اقدامات پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ بابر حیات تارڑنے تمام محکموں کو ہدایت کی کہ انسداد ڈینگی ریگولیشن پر عملدرآمد نہ کرنے والے ذمہ داران افراد کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے اور اس حوالے سے فوری ایف آئی آرز کا اندراج اور گرفتاریاں عمل میں لائی جائیں تاکہ کسی بھی جانی نقصان سے ہرممکن طور پر بچا جاسکے۔

08/04/2015 - 16:16:57 :وقت اشاعت