بند کریں
صحت صحت کی خبریںاشتعال انگیز خطبے اور تقاریر سے اصلاح ممکن نہیں،راغب حسین نعیمی
جامعہ نعیمیہ کی 63ویں سالانہ ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 15/05/2015 - 13:06:06 وقت اشاعت: 15/05/2015 - 12:56:11 وقت اشاعت: 15/05/2015 - 12:55:25 وقت اشاعت: 15/05/2015 - 12:42:02 وقت اشاعت: 15/05/2015 - 12:40:13 وقت اشاعت: 14/05/2015 - 21:48:10 وقت اشاعت: 14/05/2015 - 21:42:08 وقت اشاعت: 14/05/2015 - 21:37:39 وقت اشاعت: 14/05/2015 - 21:34:04 وقت اشاعت: 14/05/2015 - 21:24:07 وقت اشاعت: 14/05/2015 - 21:21:42

اشتعال انگیز خطبے اور تقاریر سے اصلاح ممکن نہیں،راغب حسین نعیمی

جامعہ نعیمیہ کی 63ویں سالانہ تقریب ختم بخاری شریف و تقسیم انعامات کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 14 مئی۔2015ء)تکفیری سوچ نے مسلمانوں کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا ہے۔اشتعال انگیز خطبے اور تقاریر سے امت کی اصلاح ممکن نہیں ہے۔علماء ومشائخ دعوت و تبلیغ کے ذریعے وحدت امت کیلئے اپنا کرداراداکریں۔ مدارس رشدو ہدایت کے سرچشمہ اورعلم و حکمت کے مراکز ہیں۔ان خیالات کااظہارمعروف مذہبی اسکالر علامہ محمدراغب حسین نعیمی نے گزشتہ روزجامعہ نعیمیہ کی 63ویں سالانہ تقریب ختم بخاری شریف و تقسیم انعامات کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔

انہوں نے کہا کہ قرآن وسنت کی تعلیمات پر عمل کئے بغیر دنیا و آخرت میں کامیابی ممکن نہیں۔علم انبیاء کی میراث اوراسلاف کی امانت ہے ۔مولانا سید نعیم الدین مرادآبادی اورمفتی محمدحسین نعیمی کے ادھورے مشن کوپورا کرینگے۔ تقریب سے شیخ القرآن و الحدیث جامعہ مفتی عبدالعلیم سیالوی،مفتی محب اﷲ نوری(مہتمم اعلیٰ دارلعلوم حنفیہ فریدیہ بصیرپور)مولانا محمدمحبوب احمدچشتی ودیگر نے خطاب کیا۔

جبکہ شیخ الحدیث مفتی انور القادری، مولانا غلام نصیر الدین نصیر،ڈاکٹر محمدسیلمان قادری،مفتی محمدہاشم ،مفتی محمدعمران حنفی،مفتی محمدعارف حسین،مفتی محمدمدنی،مولانا غلام مرتضیٰ، مولانا محمدکلیم فاروقی،مولانا محمدضیاء اﷲ نورانی،مفتی بلال فاروق نعیمی،نعیمین ایسوسی ایشن پاکستان کے سینئرمرکزی نائب صدرقاری محمدامیر قادری،مفتی محمدحسیب احمدقادری،مفتی قیصر شہزاد نعیمی سمیت نعیمین ایسوسی ایشن کے مرکزی عہدیداران ،بزم نعیمیہ کے کارکنان اور طلباء کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔

مفتی محب اﷲ نوری نے درس بخاری دیتے ہوئے کہا کہ مسلم ممالک میں فرقہ وارانہ سوچ کوفروغ دینا اغیار کی سازش ہے۔اختلاف رائے کے نام پر کسی بھی شخص کاخون بہانااسلام کی تعلیمات کے منافی ہے۔تقریب کے اختتام پر تعلیمی میدان میں نمایاں کارکردگی دکھانے والے طلباء میں انعامات اوراعزازی شیلڈ بھی تقسیم کی گئیں۔

14/05/2015 - 21:48:10 :وقت اشاعت