بند کریں
صحت صحت کی خبریںبرطانوی طبی ماہرین نے معدہ اور معدہ کی نالی کے سرطان کا سانس کے ذریعہ پتہ چلانے والاسادہ ٹیسٹ ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 27/06/2015 - 13:00:39 وقت اشاعت: 26/06/2015 - 16:47:42 وقت اشاعت: 26/06/2015 - 15:00:34 وقت اشاعت: 26/06/2015 - 14:41:13 وقت اشاعت: 26/06/2015 - 14:36:54 وقت اشاعت: 25/06/2015 - 16:07:15 وقت اشاعت: 25/06/2015 - 15:31:54 وقت اشاعت: 25/06/2015 - 14:11:56 وقت اشاعت: 25/06/2015 - 14:07:48 وقت اشاعت: 25/06/2015 - 13:30:58 وقت اشاعت: 24/06/2015 - 21:51:00

برطانوی طبی ماہرین نے معدہ اور معدہ کی نالی کے سرطان کا سانس کے ذریعہ پتہ چلانے والاسادہ ٹیسٹ دریافت کرلیا

لندن ۔ 25 جون (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 25 جون۔2015ء) برطانوی طبی ماہرین نے معدہ اور معدہ کی نالی کے سرطان کے سانس کے ذریعہ پتہ چلانے والاسادہ ٹیسٹ دریافت کرلیا جس کی مدد سے چند منٹوں میں معدہ کے سرطان یا معدہ میں موجود سرطانی رسولیوں کی تشخیص ممکن ہوسکے گی۔ حالیہ شائع شدہ رپورٹ کے مطابق سانس کے اس ٹیسٹ کی تصدیق اور اس کے مستند ہونے بارے لندن کے تین ہسپتالوں میں اب سانس کے ٹیسٹ بارے ٹرائل ہونگے۔

برطانوی تحقیقی ماہرین کے مطابق سرطان کے 210 مریضوں کی سانسوں کے ٹیسٹوں کاتجرباتی جائزہ لیا گیا جس کے دوران پتہ چلا کہ ٹیسٹ مضرصحت رسولیوں اور سرطان زدہ خلیوں اورمعدہ کی نالی کے سرطان کی نشاندہی ہی کرسکتا ہے۔ ماہرین کے مطابق سانس کا یہ ٹیسٹ معدہ کے سرطان کا پتہ چلانے کے حوالہ سے 90فیصد درست ہے اور چند منٹوں میں معدہ کے سرطان کی نشاندہی کرسکتا ہے جبکہ سرطان کا پتہ چلانے والے دیگرکئی طریقوں اور ٹیسٹوں میں کئی گھنٹے لگتے ہیں ۔

ماہرین کے مطابق سرطانی رسولیاں یا خلیے کاربن یا بخارات بننے والے مرکبات(کیمیکلز) کا اخراج کرتے ہیں جن سے ڈاکٹروں کو بیماری کی ابتدائی علامات کا پتہ چلانے میں مدد ملتی ہے۔ تحقیقی ماہرین کے مطابق سانس کے ذریعہ معدہ کے سرطان کا پتہ چلانے والے ٹیسٹ سے برطانیہ میں145 ملین پونڈز کی سالانہ بچت ہوگی کیونکہ دیگر طریقوں اورذرائع کے مقابلہ میں سانس کا ٹیسٹ سادہ، سستا اور تیزترین ایسا طریقہ ہے جس سے معدہ اورمعدہ کی نالی کے سرطان کا جلد ازجلد پتہ چلایا جاسکتا ہے۔

25/06/2015 - 16:07:15 :وقت اشاعت