بند کریں
صحت صحت کی خبریں دنیا میں شوگر کے تیزی سے بڑھنے کی وجہ آرام پسندی کی عادت اور شہری زندگی کو اپنالینا ہے، رپورٹ ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 18/11/2015 - 12:30:15 وقت اشاعت: 17/11/2015 - 23:00:15 وقت اشاعت: 17/11/2015 - 13:33:53 وقت اشاعت: 17/11/2015 - 12:46:50 وقت اشاعت: 16/11/2015 - 21:36:08 وقت اشاعت: 16/11/2015 - 20:45:21 وقت اشاعت: 16/11/2015 - 17:00:13 وقت اشاعت: 16/11/2015 - 16:36:28 وقت اشاعت: 16/11/2015 - 14:08:10 وقت اشاعت: 16/11/2015 - 13:58:49 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:01:47

دنیا میں شوگر کے تیزی سے بڑھنے کی وجہ آرام پسندی کی عادت اور شہری زندگی کو اپنالینا ہے، رپورٹ

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین )صحت سے متعلقہ ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ دنیا میں شوگر کے تیزی سے بڑھنے کی وجہ آرام پسندی کی عادت اور شہری زندگی کو اپنالینا ہے۔ رپورٹ میں خدشہ ظاہر کیا گیا ہے کہ آئندہ 15سالوں کے دوران دنیا میں شوگر کے مریضوں کی تعداد 592ملین(5لاکھ پاؤنڈ) ہو جائے گی۔ رپورٹ کے مطابق پاکستان کا شمار دنیا کے ان ممالک میں ہوتا ہے جہاں شوگر کا مرض بہت عام ہے، نہ صرف عمررسیدہ افراد بلکہ نوجوانوں کو بھی اس مرض کے خطرات لاحق ہیں یا وہ اس مرض کا شکار ہیں، اس وقت 96لاکھ بچے موٹاپے کا شکار ہیں، اسی موٹاپے کے سبب 15سے 25سال کے افراد میں شوگر اور ہائی بلڈپریشر کا مرض عام ہوتا جا رہا ہے، آج شوگر وبائی مرض کی شدت سے پھیل رہا ہے اور اس پر قابو پانے کیلئے حکومت اور نجی اداروں کو اپنا کردار اداکرنا ہو گا تا کہ بیماریوں سے پاک، صحت مند اور مضبوط قوم کی بنیاد ڈالی جا سکے۔

16/11/2015 - 20:45:21 :وقت اشاعت