بند کریں
صحت صحت کی خبریںکراچی ، بلدیہ ٹاوٴن میں تین منزلہ عمارت گرنے سے 7افراد ہلاک ، 14زخمی ، ہلاکتوں میں اضافے کا ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 11/07/2008 - 12:49:17 وقت اشاعت: 10/07/2008 - 14:18:23 وقت اشاعت: 09/07/2008 - 20:10:29 وقت اشاعت: 08/07/2008 - 14:50:35 وقت اشاعت: 07/07/2008 - 12:41:27 وقت اشاعت: 06/07/2008 - 12:02:10 وقت اشاعت: 05/07/2008 - 22:22:31 وقت اشاعت: 05/07/2008 - 18:00:34 وقت اشاعت: 03/07/2008 - 20:14:43 وقت اشاعت: 02/07/2008 - 17:27:53 وقت اشاعت: 02/07/2008 - 11:30:09

کراچی ، بلدیہ ٹاوٴن میں تین منزلہ عمارت گرنے سے 7افراد ہلاک ، 14زخمی ، ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ

کراچی(اردوپوائنٹ اخبا ر تازہ ترین06جولائی2008 ) کراچی کے علاقے بلدیہ ٹاوٴن میں تین منزلہ عمارت گر گئی ہے جس سے ملبے تلے دب کر7افراد ہلاک  14زخمی ہوگئے چھیپا اور ایدھی کی ایمبولینسوں نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر امدادی کارروائیوں کا آغاز کردیا ہے ۔ تفصیلات کے مطابق بلدیہ ٹاوٴن میں اتوار کی علی الصبح تین منزلہ رہائشی عمارت زمین بوس ہوجانے سے 7افرادجا ں بحق 14زخمی ہوگئے، فائربریگیڈ، سٹی ڈسٹرکٹ گورنمنٹ اور دیگر اداروں کے ارکان ا مدادی کام کررہے ہیں، حادثہ میں مزید جانی نقصان کا بھی خدشہ ہے، فائربریگیڈ کے مطابق بلدیہ ٹاوٴن کے علاقے سوات کالونی، عظیم آباد میں حاجی کاکے نامی شخص کی تین منزلہ رہائشی عمارت 2بجے زور دار دھماکے کے ساتھ گر گئی، جس کی اطلاع ملتے ہی فائربریگیڈ کا عملہ فوری طورپر موقع پر پہنچا جنہوں نے اہل محلہ کی مدد سے امدادی کام شروع کیا بعدازاں سٹی ڈسٹرکٹ گورنمنٹ کے عملے کے علاوہ ایدھی فاوٴنڈیشن، چھیپا ویلفیئر اور خدمت خلق فاوٴنڈیشن کے رضا کار بھی موقع پرپہنچے، بلدیہ ٹاوٴن کے ناظم کامران خان، رینجرز و پولیس اہلکار بھی امدادی کارروائیوں میں شریک ہوگئے،اطلاعات کے مطابق 4افراد کی لاشیں نکالی جاچکی ہیں جبکہ 4زخمیوں نے ہسپتال میں دم توڑ دیا، سول ہسپتال کے ذرائع کے مطابق عمارت گرنے کے واقعے کی اطلاع ملتے ہی ایمرجنسی نافذ کردی گئی تھی جاں بحق ہونے والوں میں 15سالہ شہزادہ ، 20 سالہ رضوانہ، 20سالہ شان، 2سالہ بچہ حارث ، 70 سالہ خاتون ماہ گل، 22سالہ غفار اور محمد ابراہیم شامل ہیں، جن کی لاشوں کو لواحقین کے حوالے کردیا گیا،ہسپتال ذرائع کے مطابق زخمی ہونے والے 14 افراد میں سے ایاز، عابد، مہوش، نثار، سلیم، سمرا، قدرت اللہ ، عارف، مسعود، اربینہ، انار بی بی، ثواب گل، ابراہیم اور سونا کو سول ہسپتال میں طبی امداد دی گئی، بتایا جاتا ہے کہ مذکورہ عمارت میں 5 خاندان مقیم تھے، علاقے کے لوگوں ک مطابق 5خاندان کے افراد کی مجموعی تعداد 28 کے لگ بھگ تھی، حادثے کا شکار ہونے والی بلڈنگ تین منزلہ دو جدید طریقے سے آر سی سی کی مدد سے ڈیڑھ سال قبل بنائی گئی تھی، اور اس کے گرنے کی وجہ فوری طور پرمعلوم نہیں ہوسکی، حادثے میں مزید ہلاکتوں کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے
06/07/2008 - 12:02:10 :وقت اشاعت