بند کریں
صحت صحت کی خبریںپنجاب اسمبلی اجلاس میں ممبران اسمبلی کی طبی سہولیات میں اضافے سمیت چار بل منظور ‘ بارڈر ملٹری ..

صحت خبریں

وقت اشاعت: 11/10/2006 - 18:18:15 وقت اشاعت: 11/10/2006 - 12:30:34 وقت اشاعت: 09/10/2006 - 19:27:05 وقت اشاعت: 09/10/2006 - 17:38:51 وقت اشاعت: 09/10/2006 - 16:48:12 وقت اشاعت: 09/10/2006 - 15:17:23 وقت اشاعت: 09/10/2006 - 13:28:50 وقت اشاعت: 09/10/2006 - 12:49:59 وقت اشاعت: 08/10/2006 - 21:29:13 وقت اشاعت: 08/10/2006 - 16:52:14 وقت اشاعت: 08/10/2006 - 15:08:07

پنجاب اسمبلی اجلاس میں ممبران اسمبلی کی طبی سہولیات میں اضافے سمیت چار بل منظور ‘ بارڈر ملٹری آرڈیننس کا ترمیمی بل پیش

لاہور (اردوپوائنٹ اخبار تازہ ترین09اکتوبر2006)پنجاب اسمبلی کے اجلاس میں گزشتہ روز لوکل گورنمنٹ کا ترمیمی بل 2006ء ‘ممبر ان اسمبلی کی طبی سہولیات میں اضافے‘ترمیمی بل کینال اینڈ ڈرینج بل 2006ء اورزرعی یونیورسٹی فیصل آباد کا ترمیمی بل 2006ء منظور کر لئے گئے جبکہ بارڈر ملٹری آرڈیننس کا ترمیمی بل ایوان میں پیش کیا گیا ۔ قبل ازیں اجلاس مقرر وقت سے چالیس منٹ کی تاخیر سے سپیکر محمد افضل ساہی کی صدارت میں شروع ہوا۔

وقفہ سوالات کے دوران مواصلات و تعمیرات کے متعلق سوالات کے جوابات دیئے گئے ۔ صوبائی وزیر مواصلات و تعمیر ات ظہیر الدین نے کہا کہ صوبائی محکمہ شاہرات نے ایکسل لوڈ کی چیکنگ کیلئے خوشاب ‘بہاؤلنگر ‘جھنگ‘سرگودھا میں مختلف مقامات پر پلوں پر وے بریج لگائے ہیں ۔ حکومت اپنے مالی وسائل کو مد نظر رکھتے ہوئے سڑکوں کے معیار کو بہتر بنانے کیلئے مرحل وار پروگرام پر عمل کر رہی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ اوور لوڈ کرنے والوں کو جرمانے کئے جاتے ہیں جس میں سے 90فیصد حکومت اور 10فیصد متعلقہ ٹھیکہ دار کو ملتے ہیں ۔ سید احسان اللہ وقاص کے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ دریائے راوی پر سید والا کے مقام پر پل کی منظوری صدر جنرل پرویز مشرف دے چکے ہیں اور اس سلسلہ میں ڈائریکٹو جاری ہو چکا ہے اور بہت جلد اس پر کام شروع کر دیا جائیگا۔

شیخ تنویر احمد کے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ واحدت کالونی ایس اینڈ جی اے ڈی کے زیر اہتمام ہے لہذا مواصلات و تعمیرات اس جگہ کو ٹھیکہ پر دینے کا مجاز نہیں ہے اور مقبوضہ جگہ کی واگزاری کیلئے مذکورہ محکمے کو ہدایات جاری کی گئی تھی جس کے تحت وہ جگہ خالی کروا لی گئی ہے اور اس وقت اس پر کوئی قابض نہیں ہے ۔ پروین مسعود بھٹی کے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ لاہور ٹریمنل روڈ کی مین انٹرس کو ٹیلی فون ایکسچینج کی وجہ سے چوڑا نہیں کیا جا سکا عمارت منتقلی کیلئے متعلقہ محکمہ سے بات چیت ہوئی ہے اور بہت جلد منتقلی کیلئے جگہ ملنے پر انٹرس کو چوڑا کیا جائیگا۔

محکمہ شاہرات کی مسلسل کوششوں سے تجاوزات کا خاتمہ ہوا ہے اور فیروز پور روڈ سے ڈیفنس ہاؤسنگ سوسائٹی کی انٹرس تک سڑک کے دونوں جانب تجاوزات کو ہٹانے کی ذمہ داری کنٹونمنٹ بورڈ کی ہے ۔ پروین مسعود بھٹی کے ایک اور سوال کے جواب میں ظہیر الدین نے کہا کہ ون یونٹ سٹاف کالونی بہاؤلپور کی معیاد 60سال ہے اور کوارٹروں کی تعداد 461ہے وہاں رہائش پذیر ملازمین سے انکی بنیادی تنخواہ کا پانچ فیصد ماہانہ کرایہ تنخواہ سے کاٹا جاتا ہے مذکورہ کالونی میں 37محکمہ جات کے ملازمین کو کوارٹر الارٹ کئے گئے ہیں جن کی ہر سال باقاعدگی سے مرمت بھی کی جاتی ہے ۔
09/10/2006 - 15:17:23 :وقت اشاعت