کویت: غیر مُلکیوں کے اقاموں پر عائد جرمانوں کی معافی کا معاملہ

وزارتِ داخلہ سے تمام غیر مُلکی ملازمین فارغ کرنے کا فیصلہ

Muhammad Irfan محمد عرفان پیر فروری 14:34

کویت: غیر مُلکیوں کے اقاموں پر عائد جرمانوں کی معافی کا معاملہ
کویت(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔4فروری 2019ء) وزارت داخلہ کی جانب سے ایک اعلامیہ جاری کر کے کہا گیا ہے اقامہ قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے غیر مُلکیوں کے جرمانے معاف نہیں کیے جا رہے۔ اس حوالے سے سوشل میڈیا پر پھیلائی جانے والی خبریں بے بنیاد اور محض افواہ ہیں۔ وزارت داخلہ ایسا کوئی فیصلہ مستقبل میں کرنے کا ارادہ نہیں رکھتی۔ سوشل میڈیا صارفین اس خبر پر بالکل یقین نہ کریں۔

دُوسری جانب کویتی وزارت داخلہ کے سیکرٹری جنرل عصام النہام نے وزارت کے تمام ذیلی اداروں کو ہدایت کی ہے کہ وہ اپنے ہاں موجود غیر مُلکیوں کو نوکریوں سے برخاست کر کے اُن کی جگہ کویتی شہری بھرتی کریں۔وزارت کے ترجمان کے مطابق اس ہدایت پر عمل درآمد کرتے ہوئے فوری طور پر 50غیر مُلکیوں کے معاہدے منسوخ کر دیئے گئے ہیں۔

(جاری ہے)

ترجمان کے مطابق اداروں کے سربراہان نے کچھ روز قبل ان غیر مُلکیوں کے ناموں کی فہرست طلب کی تھی، جن کی جگہ کویتی شہریوں کو بھرتی کیا جا سکتا ہے تاہم اداروں کے سربراہان نے ایسی فہرستیں فراہم کرنے سے انکار کرتے ہوئے یہ مؤقف اختیار کیا تھا کہ اس سے سینکڑوں غیر مُلکیوں کا رزق چھن جائے گا۔

جس پر وزارت داخلہ کی سیکرٹری نے دوبارہ سختی سے ہدایت جاری کی کہ فہرستوں کا انتظار کیے بغیر ہی غیر مُلکیوں کو نوکری سے نکال باہر کیا جائے اور ان کی جگہ شہریوں کو بھرتی کیا جائے۔ واضح رہے کہ اس وقت تمام حکومتی اداروں میں غیر مُلکیوں کی جگہ مقامی افراد کو نوکریاں دینے کی پالیسی پر عمل درآمد کیا جا رہا ہے۔

کویت سٹی میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments