عمان ؛ پاکستانیوں اور دیگر شہریوں کو مضر صحت خوراک کھلانے والے قانون کے شکنجے میں آگئے

فوڈ کنٹرول ڈیپارٹمنٹ نے معائنہ مہم میں کئی دکانوں اور گوداموں کا احاطہ کیا اس دوران 4 خلاف ورزیاں پائی گئیں جس کے نتیجے میں 735 کلو مدت ختم ہونے والی اشیائے خوردونوش کو تلف کر دیا گیا

Sajid Ali ساجد علی جمعہ 22 اکتوبر 2021 13:29

عمان ؛ پاکستانیوں اور دیگر شہریوں کو مضر صحت خوراک کھلانے والے قانون کے شکنجے میں آگئے
مسقط ( اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - 22 اکتوبر 2021ء ) خلیجی سلطنت عمان میں پاکستانیوں اور دیگر شہریوں کو مضر صحت خوراک کھلانے والے قانون کے شکنجے میں آگئے ، مسقط میونسپلٹی کے عہدیداروں نے 700 کلو سے زائد خوراک کو تباہ کر دیا ، جو کھانے کے قابل نہیں پائی گئی۔ عمانی میڈیا کے مطابق سیب میں فوڈ کنٹرول ڈیپارٹمنٹ نے مسقط میونسپلٹی کی نمائندگی کرتے ہوئے ایک معائنہ مہم چلائی جس میں کئی دکانوں اور گوداموں کا احاطہ کیا گیا ، جس کے نتیجے میں 4 خلاف ورزیاں پائی گئیں اور 735 کلو گرام مدت ختم ہونے والی اشیائے خوردونوش کو ضبط اور تلف کر دیا گیا ، اس حوالے سے میونسپلٹی کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف قانونی اقدامات کے تحت کاروائی کی جارہی ہے۔

(جاری ہے)

یہاں قابل ذکر بات یہ ہے کہ خلیجی ریاستوں میں عمان کھانے کی فی کس کھپت میں پہلے نمبر پر آیا ہے ، الپین کیپیٹل کی جی سی سی فوڈ انڈسٹری رپورٹ کے مطابق عمان میں ایک اوسط شخص ایک سال میں 930.8 کلو خوراک کا تخمینہ لگاتا ہے جب کہ 2019 میں عمان کی فی کس خوراک کی کھپت جی سی سی خطے کے لیے 733.6 کلو گرام فی کس کھانے کی مجموعی کھپت سے 27 فیصد زیادہ تھی۔

بتایا گیا ہے کہ عمان جی سی سی کے تمام ممالک میں سب سے زیادہ غذائی خود کفالت کا تناسب رکھتا ہے ، جس کی ایک وجہ خطے میں سب سے زیادہ فی کس خوراک استعمال کرنے والا ملک ہونے کا منفرد امتیاز بھی ہے ، اس ضمن میں متحدہ عرب امارات میں قائم انویسٹمنٹ بینکنگ ایڈوائزری فرم نے اپنی تازہ ترین جی سی سی فوڈ انڈسٹری رپورٹ کا اجراء کیا ، جس میں خوراک کی پیداوار اور کھپت کے بارے میں جامع اعداد و شمار پیش کیے گئے۔

رپورٹ کے مطابق عمان جی سی سی کے تمام ممالک میں سب سے زیادہ غذائی خود کفالت کا تناسب رکھتا ہے ، جو 2019 میں 48.0 فیصد تک پہنچ گیا ہے ، سلطنت کی ماہی گیری اور زراعت کے شعبوں میں مختلف سرمایہ کاری کے نتیجے میں عمان کی گھریلو خوراک کی پیداوار 11 اعشاریہ 8 فیصد سالانہ ترقی کی شرح بڑھ گئی ہے ، سلطنت کی آبادی ، جو زیادہ تر شہری اور نوجوان ہے ، 2014 اور 2019 کے درمیان 3 اعشاریہ 0 فیصد سے بڑھ گئی ہے ، مچھلیوں کے لیے خود کفالت کا تناسب 2019 تک 141.3 فیصد رہا ، اس کے علاوہ سلطنت گھریلو پیداوار کے ذریعے پھلوں ، انڈوں اور گوشت کی 50 فیصد اور سبزیوں کی 80 فیصد طلب کو پورا کرنے میں کامیاب رہی۔

متعلقہ عنوان :

مسقط میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments