غیر قانونی طور پر حج کرنے کی کوشش پر 3 لاکھ غیر مُلکی پکڑے گئے، چیک پوسٹوں سے واپس بھیج دیا گیا

حج کی آڑ میں لوگوں کو لُوٹنے والی 181 جعلی حج ایجنسیوں کے خلاف بھی کریک ڈاؤن کیا گیا ہے

Muhammad Irfan محمد عرفان منگل اگست 11:35

غیر قانونی طور پر حج کرنے کی کوشش پر 3 لاکھ غیر مُلکی پکڑے گئے، چیک پوسٹوں ..
مکّہ مکرمہ(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 6اگست 2019ء) گورنر مکّہ اور مرکزی حج کمیٹی کے سربراہ شہزادہ خالد الفیصل نے بتایا ہے کہ سعودی عرب میں مقیم 3 لاکھ 29 ہزار سے زائد غیر مُلکیوں کی جانب سے بغیر پرمٹ کے حج کرنے کی کوشش کامیاب نہ ہو سکی۔ یہ لوگ غیر قانونی طریقے سے مکّہ میں داخل ہونا چاہتے تھے، تاہم انہیں چیک پوسٹ پر روک کر واپس بھیج دیا گیا۔

جبکہ 15 سعودیوں کو غیر مُلکیوں کو غیر قانونی طور پر حج کرانے میں مدد دینے کے جُرم میں گرفتار کر لیا گیا۔ حج کی آڑ میں لوگوں کو لُوٹنے والی 181 جعلی حج ایجنسیوں کے خلاف بھی کریک ڈاؤن کیا گیا ہے اور ان ایجنسیوں کے کرتا دھرتا افراد کو گرفتار کر کے استغاثہ کے حوالے کر دیا گیا ہے۔ شہزادہ خالد الفیصل نے بتایا کہ اس بار حج کے سیزن کے لیے اب تک 16 لاکھ سے زائد زائرین دیگر ممالک سے آ چکے ہیں۔

(جاری ہے)

ان عازمین حج کی خدمت کے لیے ساڑھے تین لاکھ سے زائد خدام حج تعینات کیے گئے ہیں۔ خالد الفیصل نے مزید بتایا کہ وقوف عرفہ کے روز خطبے کا ترجمہ انگریزی، اُردو، فارسی، فرانسیسی اور ملائیشین زبانوں میں براہِ راست نشر کیا جائے گا۔ سعودی عرب کے مخالفین کے حوالے سے جاری پراپیگنڈے کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمارے دِل سب کے لیے کھُلے ہیں۔ ہم فالتو اور فضول باتوں میں اپنا وقت ضائع نہیں کرتے۔ واضح رہے کہ گورنر مکہ خالد الفیصل نے غلاف کعبہ کلیہ برداروں کے سربراہ کے حوالے کر دیا۔ 9 ذی الحجہ کو پُرانا غلافِ کعبہ اُتار کر نیا غلاف چڑھا دیا جائے گا۔

مکہ مکرمہ میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments