سعودی مملکت میں آج سے داخلی عازمین حج کی رجسٹریشن کا آغازہو گیا

داخلی عازمین حج کو 5 سال سے پہلے دوبارہ حج کرنے کی اجازت نہیں ہے

Muhammad Irfan محمد عرفان جمعرات جولائی 11:08

سعودی مملکت میں آج سے داخلی عازمین حج کی رجسٹریشن کا آغازہو گیا
ریاض( اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین- 4 جُولائی 2019ء) سعودی عرب میں مقیم پاکستانی تارکین وطن کے لیے اچھی خبر یہ ہے کہ وہ بھی اس بار حج بیت اللہ کی عظیم سعادت حاصل کر سکتے ہیں۔ وزارت حج و عمرہ کی جانب سے حج کے خواہش مندوں کے لیے مقامی اور تارکین کی رجسٹریشن کے دُوسرے مرحلے کا آغاز آج جمعرات کے روز سے کیا جا رہا ہے۔ وزارت حج کی جانب سے داخلی عازمین حج کی الیکٹرانک رجسٹریشن کے لیے ویب سائٹ جاری کی گئی ہے۔

وزارت حج کے مطابق اس بار داخلی حاجیوں کے لیے 190 کمپنیوں کو کوٹہ دیا گیا ہے۔ ویب سائٹ پر ان 190 کمپنیوں کی فہرست اور ان کی جانب سے فراہم کی جانے والی خدمات کی تفصیل بھی دی گئی ہے۔ ان کمپنیوں کو مجموعی طور پر 2 لاکھ 30 ہزار داخلی عازمین حج کا کوٹہ دیا گیا ہے۔ اس سلسلے میں کمپنیوں کے لیے مختلف پیکیجز منظور کیے گئے ہے۔

(جاری ہے)

جن کے تحت وہ داخلی عازمین کو مخصوص قسم کی خدمات مہیا کرنے کی پابند ہوں گی۔

داخلی عازمین کے لیے اولین شرط یہ ہے کہ وہ کم از کم پانچ برس کی مُدت گزرنے کے بعد حج کر رہے ہوں۔ داخلی عازمین اپنے اقامہ نمبر کے ذریعے بھی معلوم کر سکتے ہیں کہ رواں سال وہ فریضہ حج ادا کرنے کے مجاز ہیں یا نہیں۔ داخلی عازمین کی مشاعر مقدسہ یعنی مقاماتِ حج کو روانگی کا عمل 7 ذوالحجہ کی شب سے شروع ہوتا ہے۔ وزارت حج کی جانب سے داخلی عازمین کے لیے پانچ قِسم کے حج پیکیجز متعارف کروائے گئے ہیں۔ اس مقصد کے لیے الیکٹرانک رجسٹریشن کا عمل مرحلہ وار ہوتا ہے جس میں درخواست گزار کو یہ سہولت فراہم کی جاتی ہے کہ وہ حاصل کردہ پیکیج تبدیل کر سکتا ہے۔

ریاض میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments