عالم اسلام کے ممتازشاہ فیصل مرحوم کی زندگی پر بننے والی فلم آخری مراحل میں

’بورن اے کنگ‘ نامی یہ فلم ستمبر میں ریاض کے سینما گھروں میں نمائش کے لیے پیش کی جائے گی

Muhammad Irfan محمد عرفان منگل جولائی 12:30

عالم اسلام کے ممتازشاہ فیصل مرحوم کی زندگی پر بننے والی فلم آخری مراحل ..
ریاض(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 9جولائی 2019ء) اعلیٰ پائے کے ممتاز رہنما اور سعودی فرمانروا شاہ فیصل عالم اسلام میں آج مقبول و معروف ہیں۔ انہوں نے اُمتِ مُسلمہ کی یکجہتی کا پیغام دیا تھا جس کے باعث وہ دُنیا بھر کے مسلمانوں کی آنکھوں کا تارا بن گئے تھے۔ خاص طور پر پاکستان کے باسیوں کو اُن سے ہمیشہ بہت لگاؤ رہا ہے۔ اسی لگاؤ اور دِلی قربت کے باعث اسلام آباد میں اُن کے نام سے شاہ فیصل مسجد تعمیر کی گئی۔

اُن کے کئی ایسے فیصلے تھے جو سعودی مملکت اور عالم اسلام میں ہمیشہ تحسین و توصیف کی نگاہ سے دیکھے جاتے ہیں۔ تاہم کچھ عالمی طاقتوں کو اُن کا مُسلم وِژن پسند نہ آیا جس کی بناء پر اُنہیں اُن کے ایک قریبی رشتے دار کے ہاتھوں ہی 25مارچ 1975 ء کو شہید کروا دیا گیا۔

(جاری ہے)

شاہ فیصل کی بلند پایہ شخصیت اور سیاسی بصیرت کو دُنیا کے سامنے لانے کی خاطر اُن کی زندگی پر ایک فلم بنائی جا رہی ہے۔

’بورن اے کِنگ‘ نامی یہ فلم 1919ء میں شاہ فیصل کے دورہ برطانیہ پر مبنی ہے جب وہ ایک چھوٹے بچے تھے۔یہ فلم سعودی عرب، انگلینڈ اور سپین کے مشترکہ تعاون سے تیار کی گئی ہے۔ فلم کی عکس بندی ریاض اور لندن میں ہوئی ہے۔ فلم کی کہانی سعودی مصنف بدر السماری نے لکھی ہے۔ جبکہ معاون مصنفین میں ری لوریگا اور ہینری فرٹز بھی شامل ہیں۔ فلم میں شاہ فیصل کے بچپن کا کردار ایک سعودی بچے نے ادا کیا ہے۔

جبکہ دیگرکاسٹ میں کئی غیر ملکی اداکاروں کے علاوہ کئی درجن سعودی نوجوا ن اور عبداللہ علی نامی ایک انڈین اداکار بھی شامل ہیں۔اس فلم کی نمائش سعودیہ کے دارالحکومت ریاض کے سینما گھروں میں ستمبر کے دوران ہو گی۔ اس فلم کے پروڈیوسر اینڈرس گومیز نے کہا ہے کہ وہ اس فلم سے کافی مطمئن ہیں۔اس منصوبے پر کام کرنے کی خواہش کافی عرصے سے تھی۔ 2015ء میں شہزادہ ترکی الفیصل سے ملاقات کے بعد یہ خواب حقیقت میں بدل گیا۔

ریاض میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments