سعودی وزیر کو کرائسٹ چرچ حملے کے شہید کی بیوہ کو ماتھے پر بوسہ دینے پر شدید تنقید کا سامنا

وزیر برائے مذہبی امور نے بیوہ کے رو پڑنے پر اُسے اپنے ساتھ لگا کر دلاسہ بھی دِیا تھا

Muhammad Irfan محمد عرفان منگل اگست 14:48

سعودی وزیر کو کرائسٹ چرچ حملے کے شہید کی بیوہ کو ماتھے پر بوسہ دینے ..
ریاض (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 6اگست 2019ء) سعودی عرب کے وزیر برائے امور اسلامیہ، دعوت والارشاد شیخ عبداللطیف آل الشیخ کو اس وقت مملکت میں شدید تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ جس کی وجہ اُن کی حال ہی میں سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک ویڈیو ہے جس میں وہ کرائسٹ چرچ کی ایک مسجد میں دہشت گردی کے نتیجے میں شہید ہونے والے شخص کی غمزدہ بیوہ کو دلاسہ دینے کے دوران اُس کے ماتھے پر بوسہ بھی لے رہے ہیں۔

یہ واقعہ اُس وقت پیش آیا جب کرائسٹ چرچ سانحہ کے شہداء کے لواحقین اور زخمی افراد سعودی فرمانروا کے خصوصی مہمان کی حیثیت سے حج کی سعادت حاصل کرنے کے لیے سعودی مملکت کے ریاض ایئر پورٹ پر اُترے۔ وہاں اُن کے استقبال کے لیے وزیر امور اسلامی شیخ عبداللطیف آل الشیخ موجود تھے۔

(جاری ہے)

نیوزی لینڈ سے آئے ان عازمین کو خوش آمدید کہنے اور ہمدردی ظاہر کرنے کے دوران ایک شہید کی بیوہ اُن کی گفتگو کے دوران جذبات کی شدت کے باعث رو پڑی۔

جب وہاں موجود لوگوں نے سعودی وزیر کی توجہ اس غمزدہ خاتون کی جانب کرائی تو وزیر صاحب نے خاتون کو دلاسہ دیتے ہوئے اپنے ساتھ لگالیا اور اُن کے ماتھے پر بوسہ دیا۔ اس منظر کی ویڈیو جب ایک سعودی خاتون فضیلہ الجفال نے سوشل میڈیا ویب سائٹ ٹویٹر پر پوسٹ کی تو اس کے بعد صارفین کی بڑی گنتی نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے سعودی وزیر کے اس عمل کو نامناسب اور خلافِ شرع قرار دیا۔

کئی جوشیلے لوگوں نے تو اس اقدام کو بے شرمی کا اظہار قرار دے کر سعودی وزیر کی برطرفی کا مطالبہ بھی کر ڈالا۔ تاہم صارفین کی ایک تعداد ایسی بھی تھی جس نے عبداللطیف آل الشیخ کے عمل کو اُن کی انسانیت پرستی اور رحم دِلی کا اظہار قرار دیا اور اُن کی خوب تعریف کر ڈالی۔ ان کے اس اقدام کے حامیوں اور مخالفین کے درمیان اس وقت بھی سوشل میڈیا پر ایک جنگ چھڑی ہوئی ہے۔

یاد رہے کہ مجموعی طور پر کرائسٹ چرچ حملے کے متاثرین کے 200 رشتہ داروں کو شاہی ضیافت کے لیے حج پر بُلایا گیا ہے۔ اس موقع پر سعودی عرب میں تعینات نیوزی لینڈ کے سفیرنے کہا کہ نیوزی لینڈ کی حکومت اس انسانیت نواز اقدام پر سعودی عرب کی انتہائی شکر گزار ہے۔ جبکہ متاثرین کی جانب سے اُنہیں حج کا موقع دینے پر سعودی فرماں روا شاہ سلمان اور ولی عہد محمد بن سلمان کا دلی شکریہ ادا کیا گیا اور حج کے انتظامات کو مثالی قرار دیا گیا۔

ریاض میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments