ابو ظہبی: پانچ ماہ سے تنخواہیں وصول نہ کرنے والے پاکستانیوں کی حالت قابلِ رحم ہو گئی

کیٹرنگ کمپنی نے 300سے زائد غیر مُلکی ملازمین سے دھوکا کر ڈالا

Muhammad Irfan محمد عرفان جمعہ جنوری 16:59

ابو ظہبی: پانچ ماہ سے تنخواہیں وصول نہ کرنے والے پاکستانیوں کی حالت ..
ابو ظہبی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔11 جنوری 2019ء) ابو ظہبی کی ایک کیٹرنگ کمپنی کے 300 غیر مُلکی ملازم اس وقت روٹی کے ایک ایک لقمے کے لیے محتاج ہو گئے ہیں۔ کیونکہ کمپنی کی جانب سے اُنہیں گزشتہ پانچ ماہ سے تنخواہوں کی ادائیگی نہیں کی گئی اور نہ ہی اُنہیں کھانے کو کچھ دیا جا رہا ہے۔ یہ ملازمین شیف، ڈرائیورز، کلینزر، مرمت اور آفس بوائز کے عہدوں پر کام کر رہے ہیں جن میں پاکستانیوں کی بھی بڑی تعداد شامل ہے۔

اس کے علاوہ بھارت، بنگلہ دیش، نیپال، مصر، نائیجریا اور فلپائن سے تعلق رکھنے والے کارکن بھی شامل ہیں۔ ایک پاکستانی ملازم نے بتایا کہ کمپنی نے اُنہیں پچھلے پانچ ماہ سے تنخواہیں ادا نہ کر کے زیادتی کی انتہا کر دی ہے۔ حتیٰ کہ اُنہیں پیٹ بھرنے کے لیے آس پاس کی مارکیٹوں کے باہر مسترد شُدہ اور خراب خوراک پر گزارہ کرنا پڑ رہا ہے۔

(جاری ہے)

لیکن آج تو اُن کے ساتھ ایسا ہوا ہے جس سے اُن کا صبر جواب دے گیا ہے۔

آج صبح کمپنی کی جانب سے دی گئی رہائش گاہوں کے پانی اور بجلی کے کنکشن کاٹ دیئے گئے ہیں۔ کمپنی کے شرمناک رویئے کے خلاف مقدمات بھی درج کرائے گئے ہیں مگر ابھی تک ان پر کوئی فیصلہ نہیں سُنایا گیا۔ خلیج ٹائمز کے مطابق جب کمپنی کی انتظامیہ سے رابطہ کیا گیا تو اُنہوں نے ٹرخاتے ہوئے کہا کہ ملازمین کو درپیش مسائل کا جلد حل نکل آئے گا اور اُنہیں اگلے دو ہفتوں کے اندر تنخواہیں دے دی جائیں گی۔

تاہم کمپنی کے ملازمین کا کہنا ہے کہ کمپنی والے سراسر جھوٹ سے کام لے رہے ہیں کیونکہ آج صبح اُن کے بجلی اور پانی کے کنکشن کاٹنے کے بعد اُنہیں کہا گیا ہے کہ وہ 24 گھنٹے کے اندر اندر کمپنی کی رہائش گاہ سے اپنا بوریا بسترا سمیٹ کر نکل جائیں۔ہمارا کوئی پُرسانِ حال نہیں ہے۔ یہاں تک کہ ہمارے پاس اپنے وطن واپس لوٹنے کے لیے بھی رقم موجود نہیں ہے۔ ہماری مدد کی جائے اور ہمیں ہمارے بقایا جات دلوائیں جائیں۔

ابو ظہبی میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments