دُبئی:13 سالہ بچی سے جسم فروشی کی اطلاع دینے والابھی گرفتار

مخبری کرنے والا نوجوان خود بھی بچی سے کئی بار جنسی ہوس پُوری کر چُکا تھا

Muhammad Irfan محمد عرفان پیر جنوری 14:32

دُبئی:13 سالہ بچی سے جسم فروشی کی اطلاع دینے والابھی گرفتار
دُبئی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔7 جنوری 2019ء) پولیس نے ایک ایسے نوجوان کو بھی گرفتار کر لیا ہے جس نے پولیس ہیلپ لائن پر فون کر کے ایک تیرہ سالہ بچی سے جسم فروشی کروائے جانے کی مخبری کی تھی۔ پولیس کے مطابق49 سالہ شخص ایک تیرہ سال کی بچی کواپنی سگی بیٹی ظاہر کر کے اُس کے مُلک سے دُبئی لے آیا تھا۔ ملزم اس معصوم بچی سے اپنے فحاشی کے اڈے پر مسلسل ایک سال تک جسم فروشی کرواتا رہا اور اس دوران خود بھی اُسے درجنوں بار جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا۔

جب بھی بچی اپنے جسم کے گاہکوں کی خواہش پُوری کرنے سے انکار کرتی، تو قحبہ خانے کا مالک اُسے لکڑی کے ڈنڈے سے بے تحاشا پیٹ ڈالتا۔ اسی دوران ایک 29 سالہ نوجوان بھی اس فحاشی کے اڈے پرمتعدد بار آیا اور بچی سے اپنی جسمانی ہوس پُوری کی۔

(جاری ہے)

تاہم کئی مہینوں پر محیط تعلق کے دوران وہ اس کم سن لڑکی کی محبت میں گرفتار ہو گیا اور اُسے اس جہنم سے عذاب دلانے کے لیے سوچ بچار کرنے لگا۔

اُس نے قحبہ خانے کے مالک کو کہا کہ وہ اس کم عمر لڑکی سے دھندا کرانا چھوڑ دے۔ اس پر بات خواتین کا دلال اُس سے اُلجھ پڑا۔ نوجوان نے پولیس کو اطلاع کر دی۔ جس نے قحبہ خانے پر چھاپہ مار کر اس کے مالک کو گرفتار کر لیا اور بچی کو برآمد کر کے محفوظ مقام پر منتقل کر دیا۔ تاہم بعد کی تفتیش میں انکشاف ہوا کہ پولیس کو اطلاع دینے والا نوجوان خود بھی کئی بار بچی سے جنسی لذت حاصل کر چُکا تھا۔ جس پر اس نوجوان کو بھی گرفتار کر لیا گیا۔ قحبہ خانے سے گرفتار دیگر دو طوائفوں نے بھی تصدیق کی کہ اُن کا دلال بچی سے جسم فروشی کروانے کے علاوہ خود بھی اُسے درجنوں بار زیادتی کا نشانہ بناچکا تھا۔

متعلقہ عنوان :

دبئی میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments