دُبئی: پاکستانی باورچی 10 سالہ بھارتی بچی سے شرمناک حرکات پر گرفتار

ملزم نے ننھی بچی رہائشی بلڈنگ کی لفٹ میں جنسی ہراسگی کا نشانہ بنایا تھا

Muhammad Irfan محمد عرفان ہفتہ ستمبر 13:03

دُبئی: پاکستانی باورچی 10 سالہ بھارتی بچی سے شرمناک حرکات پر گرفتار
دُبئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین،14ستمبر 2019ء ) دُبئی پولیس نے ایک پاکستانی شخص کو کم سن بچی سے غلط حرکات پر گرفتار کر لیا ہے۔ 45 سالہ پاکستانی باورچی کا کام کرتا ہے۔ بچی کے والدین کی جانب سے شکایت درج کرانے کے بعد ملزم کو گرفتار کر کے نائف پولیس اسٹیشن منتقل کر دیا گیا۔ 10 سالہ بچی کے والدین نے الزام لگایا کہ پاکستانی ملازم نے اُن کی بیٹی کو رہائشی بلڈنگ کی لفٹ میں زبردستی اپنے ساتھ چمٹا لیا اورکئی بار چُومااور اس کے جسم کے مختلف حصوں کو چھُوتا رہا۔

جب بچی نے لفٹ سے باہر آنے کی کوشش کی تو ملزم نے اسے زبردستی روکنے کی کوشش کی۔ متاثرہ بچی نے عدالت کو بتایا کہ وہ ٹیوشن پڑھنے کے بعد رات آٹھ بجے واپس آئی تو اسے بلڈنگ کے گراؤنڈ فلور پر ملزم بھی نظر آیا۔ وہ تیسری منزل پر واقع اپنے اپارٹمنٹ میں جانے کے لیے جونہی لفٹ میں سوار ہوئی تو ملزم بھی اس کے ساتھ لفٹ میں گھس گیا۔

(جاری ہے)

ملزم نے اس سے لفٹ میں سوال کیا کہ وہ کس اسکول میں پڑھتی ہے تو بچی نے اس کے سوال کا کوئی جواب نہ دیا۔

اچانک ملزم بچی کے بالکل ساتھ لگ کر کھڑا ہو گیا اور اسے اپنے ساتھ چمٹا کر اس سے غلط حرکات کرنے لگا اور اس کے گال بھی چُومے۔ جب تھرڈ فلوڑ پر پہنچ کر لفٹ کا دروازہ کھُلا تو پاکستانی باورچی نے اسے باہر نکلنے سے روکنے کی کوشش کی تاہم بچی خود کواس کی گرفت سے چھُڑا کر بھاگ اُٹھی اور اپنے اپارٹمنٹ میں جا کر ملزم کی شرمناک حرکات کے بارے میں آگاہ کیا۔

والدین نے پولیس کو شکایت درج کروائی۔ پولیس نے عمارت میں نصب کلوز سرکٹ کیمروں کی ویڈیو چیک کی تواس میں ملزم کو بچی کے پیچھے پیچھے لفٹ میں داخل ہوتے دیکھا گیا۔ بعد میں بچی کو لفٹ سے باہر آتے ہوئے خوفزدہ حالت میں دیکھا گیا۔ ملزم کی شناخت کرنے کے بعد اسے گرفتار کر لیا گیا۔ ملزم نے پولیس کے روبرو اپنی شرمناک حرکات کا اعتراف کر لیا۔ 16 ستمبر 2019ء کو ملزم کو عدالت کی جانب سے سزا سُنائے جانے کا واضح امکان ہے۔

متعلقہ عنوان :

دبئی میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments